تازہ ترین

ندی نالوں سے ریت وبجری نکانے کا سلسلہ عروج پر | اننت ناگ میںمافیا کے خلاف کارروائی کرنے کاعوام کا مطالبہ

تاریخ    7 نومبر 2020 (00 : 01 AM)   


عارف بلوچ
اننت ناگ//جنوبی کشمیر کے ضلع اننت ناگ میں ندی نالوں سے غیر قانونی طور سے معدینات نکالنے کا کام شدومد سے جاری ہے ،جس سے ان مشہور ندی نالوں کی شان رفتہ متاثر ہوئی ہے ۔ضلع میں نالہ برنگی اور نالہ ساندرن کے مختلف مقامات پر غیر قانونی طریقے سے ریت،باجری ،پتھرنکالنے کا کام دن رات شدومد سے جاری ہے ۔ندی نالوں میں روزانہ سینکڑوں جے سی بی ،ٹریکٹر و ٹپر معدنیات نکالنے میں مصروف نظر آتے ہیں جس سے نہ صرف ان مشہور ندی نالوں کی خوبصورتی متاثر ہوئی ہے، بلکہ ان دریائوں میں پائی جارہی ٹروٹ مچھلیوں کی پیدوار بھی ختم ہورہی ہے ۔ہلڑ کوکرناگ پل سے لے کر لارکی پورہ پل تک نالہ برنگی کو ان مافیائوں نے زبردست نقصان پہنچایا ہے ۔مشہور ندی میں جگہ جگہ گہرے کھڈے بن گئے ہیںاس کے علاوہ غیر قانونی نکاسی سے فلڈ چینل کو بھی زبردست نقصان پہنچا ہے ۔مقامی لوگوں کا کہنا ہے کہ اس ندی میں بغیر کسی رکاوٹ سے کام دن رات جاری ہے ۔دوران شب ندی میں مشینوں کے شور سے دریا کے نزدیک رہنے والے لوگوں کو سخت اذیت سے گذرنا پرتا ہے ۔لوگوں کا کہنا ہے کہ ندی نالوں میں جاری غیر قانونی کام ملی بھگت کے بغیر ممکن نہیں ہے ۔انہوں نے کہا متعلقہ محکمہ کے ملازمین نے کھنن مافیائوں کو ندی نالوں کو برباد کرنے کی کھلی چھوٹ دے رکھی ہے ۔کہی بار شکایت کرنے کے باوجود بھی آفسران خاموش تماشائی کا رول ادا کر رہے ہیں۔ لوگوں میں محکموں کے تئیں سخت ناراضگی پائی جارہی ہے ۔اُنہوں نے ایل جی انتظامیہ سے اپیل کی ہے کہ وہ اس غیر قانونی سلسلے پر فوری روک لگانے کیلئے ٹھوس اقدامات اٹھائے۔اس سلسلے میں جب ڈسڑکٹ مینرل آفسر سے فون پر بات کرنے کی کوشش کی گئی تاہم ان سے رابطہ نہیں ہو سکا ۔