تازہ ترین

نوجوانوں تک پہنچنے کا راستہ،ایس کے آئی سی سی میں ورکشاپ

۔5برسوں میں بیروزگاری کا خاتمہ ہوگا:سنہا

تاریخ    1 نومبر 2020 (00 : 01 AM)   


بلال فرقانی
سرینگر//جموں و کشمیر کے لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے کہا ہے کہ مرکزی زیر انتظام خطے میں انتظامیہ کی طرف سے روزگار کی پالیسی بنائی جارہی ہے اور آئندہ5 برسوںمیں ، بے روزگاری کا خاتمہ ہوگا۔ ایس کے آئی سی سی میں نوجوانوں تک پہنچنے سے متعلق ورکشاپ کے حاشیہ پر صحافیوں سے بات کرتے ہوئے ، منوج سنہا نے کہا کہ آج ملک کے بڑے کاروباری اداروںنے ورکشاپ میں شرکت کی اور اس پر غور کیا کہ بے روزگاری کے خاتمے کیلئے کیا کیا جاسکتا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ آج کے ورکشاپ کا بنیادی مقصد نوجوانوں کو مناسب مشورے دینا تھا۔لیفٹیننٹ گورنرنے کہا کہ حکومتی سطح پروہ روزگار کی پالیسی پر کام کر رہے ہیں اور اگلے پانچ سالوں میں بے روزگاری ختم ہوجائے گی۔ڈائریکٹر آئی آئی ایم جموں بی ایس سائیں نے ورکشاپ میں اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ جموں و کشمیر میں رضاکارانہ تنظیموں کو آگے آنا چاہئے اور جموں و کشمیر میں یوتھ آؤٹ ریچ کے دائرہ کار کو وسیع کرنا چاہئے۔اس موقع پر اشوک لیلینڈ نے دیہی اسکولوں کے قیام کی تجویز پیش کی جہاں اسکول چھوڑنے کی مہارت سیکھنے کے لئے داخلہ لیا جاسکے۔ورکشاپ کے کچھ شرکاء نے ایک پورٹل اور کال سنٹربنانے پر بھی زور دیا جو سب کیریئر سے متعلقہ مواد ، آگاہی ،مہارت ، تعلیم اور روزگار کے حصول سے متعلق مواقع فراہم کرتے ہیں۔ شرکاء نے بنیادوں پر ہنرمندی کے پروگراموں کی حمایت کی تاکہ جموں و کشمیر کے نوجوانوں میں صلاحیتوں کی نشاندہی کی جاسکے اور بیک وقت ان کی کھوج کی جاسکے۔