تازہ ترین

بھرتی عمل کیلئے پہلے سے ہی شفاف طریقۂ کار موجود :فاروق خان

سرینگر میں عوامی دربار کے دوران90 وفود مشیر سے ملاقی

تاریخ    23 اکتوبر 2020 (00 : 01 AM)   


سرینگر// لیفٹیننٹ گورنر کے مشیر فاروق خان نے کل کہا کہ جموں و کشمیر میں بھرتیوں کے لئے ایک شفاف طریقۂ کار پہلے سے موجود ہے جس کے لئے کسی بھی ملازمت کے خواہشمند کو سرکاری خدمات میں داخلے کے لئے طریقۂ کار پر عمل کرنا ہوگا۔مشیر نے اِن باتوں کا اظہار کل لیفٹیننٹ گورنر س شکایتی سیل چرچ لین سونہ وارمیں اَپنے ہفتہ وار عوامی شکایتی ازالہ  کیمپ کے دوران کیا ۔کشمیر اور جموں ڈویژن کے مختلف علاقوں سے تعلق رکھنے والے زائد از 90 عوامی وفود اور اَفراد نے مشیر سے ملاقات کی اور اَپنے علاقوں کے مختلف مسائل  جیسے تعلیم ، سڑک رابطے ، صحت معاملا ت وغیرہ مشیر کو گوش گذار کئے اور ان کے ازالے کے لئے مشیر کی ذاتی مداخلت طلب کی۔جسمانی طور خاص افراد کی طرف سے ایک وفد نے نابینا بچوں کے سکولی مسائل ، تھری وہیلر سکوٹیاں ، ماہانہ الائونس میں اِضافے کے معاملات اُٹھائے۔اسی طرح این آئی ایس کمیونٹی کوچوں کی ایک نمائندگی نے محکمہ امورِ نوجوان و کھیل کود میں ان کی خدمات کو باقاعدہ کرنے اور التوأ اجرتوں کو واگزار کرنے کی مانگ کی۔ بڈگام کے گاؤں کانہامہ کے ایک وفد نے اپنے علاقے میں سڑکوں کی تجدید و مرمت کی مانگ کی۔اننت ناگ سے آل ٹرائبل کاڈی نیشن کمیٹی کے ایک اور وفد نے مشیر کے سامنے متعدد ترقیاتی امور اُٹھائے۔ بین الاقوامی گوجر مہاسبھا کے ایک اور وفد نے لولاب کے علاقے گاؤں میدان پورہ میں ایس بی آئی برانچ کے قیام کی مانگ کی۔کیمپ کے دوران اُٹھائے گئے دیگر امور میں بجلی کے شعبے ، تعلیم ، پی ایچ ای اور آبپاشی ، صحت ، صنعت و اطلاعات کے محکموں ، سڑکوں ، نالوں ،سکولوں اور دیگر عوامی سہولیات کی درجہ بندی ، زمین تجاوزات کے مسائل کے علاوہ سماجی بہبود ، آئی سی ڈی ایس ، بڑھاپے اور ناخیز افراد کا پنشن سے متعلق متعدد امور شامل ہیں۔بارہمولہ ، رفیع آباد ، سوپور ، سری نگر ، پلوامہ ، پامپور ، راجوری ، پونچھ ، جموں ، کپواڑہ ، ہندواڑہ اور دیگر علاقوں سے متعدد دیگر افراد اور نمائندوں نے بھی مشیر سے ملاقات کی اور اپنے معاملات اور مشکلات گوش گذار کئے۔مشیر خان نے اَفراد اور وَفود کے مسائل بغور سنے اور انہیں یقین دِلایا کہ ان کے معاملات اور مسائل پر غور کیا جائے گا۔