تازہ ترین

کیا روزانہ ’ماؤتھ واش‘

کرنے سے کوروناختم ہو جاتا ہے؟

تاریخ    22 اکتوبر 2020 (00 : 01 AM)   


کورونا وائرس نے پوری دنیا کو تباہی کے دہانے پر لا کر کھڑا کر دیا ہے، حالانکہ اب حالات کچھ ممالک میں بہتر نظر آ رہے ہیں لیکن ابھی تک کوئی ایسی دوا یا ٹیکہ منظرعام پر نہیں آیا ہے جسے صد فیصد محفوظ اور کارآمد ٹھہرایا جا سکے۔ اس درمیان کورونا وائرس پر تحقیق کا عمل جاری ہے اور روزانہ کچھ نہ کچھ نیا سامنے آ رہا ہے۔ ایک نئی تحقیق میں اس بات کا پتہ چلا ہے کہ 'ماؤتھ واش' میں کورونا وائرس کو بے اثر کرنے کی صلاحیت ہو سکتی ہے۔دراصل سائنسدانوں نے ایک تحقیق میں پایا ہے کہ کچھ 'اورل اینٹی سیپٹکس' اور 'ماؤتھ واش' سے انسانوں میں کورونا وائرس کا اثر ختم کرنے میں کامیابی مل سکتی ہے۔ اس بات کا دعویٰ میڈیکل وائرولوجی کے جرنل میں شائع نتائج میں کیا گیا ہے۔ تحقیق میں بتایا گیا ہے کہ کچھ اورل اینٹی سیپٹسک اور ماؤتھ واش انفیکشن کے بعد منھ میں وائرس کی مقدار کو کم کرنے کے لیے کارآمد ہو سکتے ہیں اور کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو کم کرنے میں مدد کر سکتے ہیں۔تحقیق کے دوران سائنسدانوں نے یہ بھی پایا کہ کئی نوزل اور اورل ریجنس میں انسانی کورونا وائرس کو بے اثر کرنے کی ایک مضبوط صلاحیت موجود تھی، جو ظاہر کرتا ہے کہ ان پروڈکٹس میں ان لوگوں کے ذریعہ پھیلے وائرس کی مقدار کو کم کرنے کی صلاحیت ہو سکتی ہے جو کورونا پازیٹو ہیں۔
 

تازہ ترین