کورونا وائرس| مہلوکین 6،متاثرین 610

اموات کی تعداد1372، جموں میں کل متاثرین 87364ہزار

تاریخ    18 اکتوبر 2020 (00 : 01 AM)   


پرویز احمد
 سرینگر // جموں و کشمیر میں کورونا وائرس سے مزید 6افراد فوت ہوگئے۔ مہلوکین کی مجموعی تعداد 1372تک پہنچ گئی جن میں سے 454جموں جبکہ 918کشمیر سے تعلق رکھتے ہیں۔ سنیچر کو 28سفر کرنے والوں سمیت 610 افراد  کی رپورٹیں مثبت آئیں۔ متاثرین کی مجموعی تعداد 87364 ہوگئی۔ ان میں 52311 کشمیر جبکہ جموں میں یہ تعداد 35ہزار کا ہندسہ پار کرکے 3505تک پہنچ گئی ہے۔ تازہ 610متاثرین میں363کشمیر جبکہ247جموں صوبے سے تعلق رکھتے ہیں۔ کشمیر کے363متاثرین میں 129سرینگر، 32بڈگام، 58بارہمولہ، 28پلوامہ، 25کپوارہ، 19اننت ناگ، 36بانڈی پورہ، 24گاندربل،6شوپیان اور 6کولگام سے تعلق رکھتے ہیں۔ جموں کے 247متاثرین میں 116سرینگر، 16راجوری، 10ادھمپور، 17ڈوڈہ، 8کٹھوعہ، 11پونچھ، 8سانبہ، 38کشتواڑ،19رام بن اور 4ریاسی سے تعلق رکھتے ہیں۔  
۔ 6اموات
 پچھلے 24گھنٹوں کے دوران جموں و کشمیر میں کورونا وائرس سے مزید 6افراد فوت ہوگئے۔ مرنے والوں میں 2کشمیر جبکہ4جموں صوبے سے تعلق رکھتے ہیں۔ کشمیر میں فوت ہونے والے 2افراد میں ایک پلوامہ جبکہ ایک بارہمولہ سے تعلق رکھتا ہے۔ پلوامہ میں تعینات محکمہ صحت کے ایک سینئر افسر نے بتایا کہ رتنی پورہ پلوامہ سے تعلق رکھنے والا ایک 85سالہ شخص کورونا وائرس سے پیدا ہونے والے نمونیا سے فوت ہوگیا ‘‘۔سینئر ڈاکٹر نے بتایا کہ مریض 12اکتوبر کو سکمز صورہ میں نمونیا کی وجہ سے داخل ہوا جہاں وہ 17اکتوبر کو رات دئے گئے فوت ہوگیا ۔بارہمولہ میں تعینات محکمہ صحت کے ایک سینئر ڈاکٹر نے بتایا کہ بارہمولہ میں بھی ایک شخص کورونا وائرس سے فوت ہوگیا ہے۔ جموں صوبے میں کورونا وائرس سے 4افراد فوت ہوگئے جن میں ایک ڈوڈہ اور 3کشتواڑ سے تعلق رکھتے ہیں۔ 
حکومتی بیان
حکومت کی طرف سے جاری کئے گئے بلیٹن میں بتایا گیا ہے کہ نوول کورونا وائرس کے87,364معاملات سامنے آئے ہیں جن میں سے8,704سرگرم معاملات ہیں ۔ اَب تک77,288اَفراد صحتیاب ہوئے ہیں ۔جموں وکشمیر میں کوروناوائرس سے مرنے والوں کی مجموعی تعداد1,372تک پہنچ گئی ،جن میں سے 918کا تعلق کشمیر صوبہ سے اور454کاتعلق جموں صوبہ سے ہیں۔اِس دوران سنیچر کو مزید809افرادشفایاب ہوئے ہیںجن میںجموں صوبے کے405اَفراداور کشمیر صوبے کے 404اَفرادشامل ہیں۔بلیٹن میں مزید کہا گیا ہے کہ اَب تک 19,78,626ٹیسٹوں کے نتائج دستیاب ہوئے ہیں جن میں سے  17؍اکتوبر 2020 ء؁ ء کی شام تک 18,91,262نمونوں کی رِپورٹ منفی پائی گئی ہے ۔علاوہ ازیں اَب تک6,26,061افراد کو نگرانی میں رکھا گیا ہے جن کا سفر ی پس منظر ہے اور جو مشتبہ معاملات کے رابطے میں آئے ہیں۔ اِن میں25,203اَفراد کو ہوم قرنطین میں رکھا گیا ہے جس میں سرکار کی طرف سے چلائے جارہے قرنطین مراکز بھی شامل ہیں ۔8,704  اَفراد کوآئیسولیشن میں رکھا گیا ہے جبکہ50,263اَفراد کو گھروں میں نگرانی میں رکھا گیا ہے۔اِسی طرح بلیٹن کے مطاب5,40,519اَفرادنے 28روزہ نگرانی مدت پوری کی ہے۔
 

پرنسپل میڈیکل کالج سرینگر

کورونا ٹیسٹ مثبت، گھرمیں قرنطینہ

پرویز احمد
 
سرینگر//پرنسپل گورنمنٹ میڈیکل کالج سرینگر ڈاکٹر سامیہ رشید کی کورونا رپورٹ مثبت آئی ہے۔ میڈیکل ترجمان ڈاکٹر محمد سلیم خان نے بتایا ’’ ہلکی علامات کی موجودگی کے بعد پرنسپل نے تشخیصی ٹیسٹ کیاجس کی رپورٹ مثبت آئی ہے اور وہ گھر قرنطینہ میں ہے۔ڈاکٹر خان نے بتایا کہ ہلکی علامات کی موجودگی کی وجہ سے انہیں ہوم آئیسولیشن میں رکھا گیا ‘‘۔ ڈاکٹر سامیہ رشید کورونا مریضوں کو فراہم کئے جانے والے علاج و معالجہ پر کافی گہرائی سے نظر رکھی ہوئی تھیں اور اسی وجہ سے صدر اسپتال اور سی ڈی اسپتال کا اکثر دورہ کرتی تھیں‘‘۔انہوں نے کہا کہ اسپتال میں کورونا وائرس مریضوں کے انتظامات کی دیکھ ریکھ اور انکے علاج و معالجہ کے دوران وائرس سے متاثر ہوئیں۔ ڈاکٹر سلیم نے کہا کہ ڈاکٹر سامیہ رشید کی رپورٹ مثبت آنے کے بعد شعبہ جنرل میڈیسن کے ایچ او ڈی ڈاکٹر تنویر مسعود بطور قائمقام پرنسپل کام کریں گے۔ 
 

تازہ ترین