سعدہ کدل میں فورسز اہلکارآگ بگولہ

مرغ فروش کی پٹائی،کئی مرغ مار ڈالے اور موبائل توڑ ڈالا

تاریخ    18 اکتوبر 2020 (00 : 01 AM)   
(File Photo)

ارشا داحمد
سرینگر//پائین شہر کے سعدہ کدل علاقہ میںاس وقت حالات کشیدہ ہوگئے جب سی آر پی ایف اہلکاروں نے ایک مرغ فروش کی پٹائی کرکے اس کے کئی مرغوں کومار ڈالااور اس کا موبائل فون بھی توڑ ڈالا۔عینی شاہدین کے مطابق سعدہ کدل سے گزرنے والی سی آر پی ایف گاڑیوں پر مبینہ طور پر پتھرائو ہوا جس کے بعد سی آر پی ایف اہلکاروں نے ایک مقامی مرغ فروش کی پٹائی کردی اور اس کے مرغوں کو ہلاک کردیا۔ مرغ فروش نے سی آر پی ایف اہلکاروں پر الزام عائد کیا کہ انہوں نے سنگ بازی کا غصہ مجھ پر نکالا۔مرغ فروش کے مطابق سی آر پی ایف اہلکاروں نے اس کی بلاوجہ پٹائی کی اور بندوق کے بٹھوں سے اسکے سر کوپیٹا ، موبائل فون توڑ ڈالا اور کئی مرغوں کو مار کر ہلاک کردیا۔ عینی شاہدین کے مطابق مرغ فروش گزشتہ پندرہ برسوں سے یہاں پر دکانداری کررہا ہوں تاہم آج فورسز نے سنگبازوں کا نزلہ دوکاندار پر اتارا۔ قابل ذکر ہے کہ مرغ فروش کا ایک ویڈیو بھی سوشل میڈیا پر وائرل ہوچکا ہے جس میں وہ اپنی روداد سنارہا تھا۔ اس نے کہا کہ میری پٹائی کے بعد فورسز اہلکاروں نے مجھے دھمکی دیتے ہوئے کہا کہ اس کے بھیانک نتائج سامنے آئیں گے۔ مرغ فروش نے کہا کہ اس سلسلے میں نے پولیس سے بات کی جنہوں نے معاملے کے حوالے سے کارروائی کی یقین دہانی کرائی۔اس ضمن میں جب سی آر پی ایف کے ترجمان پنکج سنگھ سے بات کی گئی تو انہوں نے کہا کہ وہ اس معاملے کے حوالے سے جانکاری حاصل کریں گے اور اگر یہ بات صحیح ہے تو ملوث اہلکاروں کے خلاف باضابطہ کارروائی کی جائے گی۔ 
 

تازہ ترین