۔90 برس میں مسجد الحرام میں توسیع اور سہولتیں

تاریخ    27 ستمبر 2020 (00 : 02 AM)   


 ابوظہی//مملکت سعودی عرب کے قیام کے بعد مسجد الحرام اور مسجد نبوی کی توسیع و تزئین کرکے حج و عمرہ زیارت پر آے والوں کے لیے سہولتیں فراہم کرنے کا سلسلہ شروع کیا گیا تھا- 90 برس سے مقدس مساجد کی خدمت سعودی حکومت کا امتیازی نشان ہے۔ العربیہ نیٹ کے مطابق مقدس مساجد کی انتظامیہ نے سعودی عرب کے 90 ویں قومی دن کے موقع پر رپورٹ میں مسجد الحرام میں توسیع اور سہولتوں کا احاطہ کیا ہے۔مسجد الحرام کے توسیعی حصوں میں سی سی ٹی وی کیمرے نصب کیے گئے ہیں۔ ان میں سے 2500 غیر متحرک اور 3 ہزار متحرک کیمرے ہیں۔ 285  کیمرے رات کی تاریکی میں بھی کام کرتے ہیں- مسجد الحرام میں نمازیوں کی گنتی کرنے، حرم شریف کے اندر اور باہر اڑدھام کو کنٹرول کرنے کے لیے 950 کیمرے نصب یہ ’کراؤڈڈ مینجمنٹ سسٹم‘ کا حصہ ہیں۔ مسجد الحرام میں ’ایکسس کنٹرول سسٹم‘ بھی لگایا گیا ہے تاکہ سیکیورٹی رومز، الیکٹرانک رومز اور مکینیکل سازوسامان کے رومز میں متعلقہ افراد ہی آجا سکیں۔  ’سیکیورٹی انٹرکام‘ سسٹم مسجد الحرام کے تمام دروازوں پر لگایا گیا ہے۔  مسجد الحرام میں آتشزدگی کے ممکنہ واقعات کو قابو کرنے کے لیے ’فائرالارم سسٹم‘ لگایا گیا ہے۔ اس کی بدولت آگ کی شروعات ہوتے ہی فائر بریگیڈ یونٹس حرکت میں آجاتے ہیں۔مسجد الحرام کی انتظامیہ نے آگ بجھانے کے لیے 2500 سے زیادہ واٹر پائپ سے لیس ڈبے نصب کرائے ہیں۔علاوہ ازیں آگ بجھانے کیلئے ’واٹر مسٹ سسٹم‘ کا بھی بندوبست کیا گیا ہے۔مسجد الحرام میں چوبیس گھنٹے روشنی کا انتظام رکھنے کے لیے یو پی ایس کا بندوبست کیا گیا ہے۔ ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کے لیے جنریٹرز کا بھی انتطام کیا گیا ہے۔ حرم مکی میں روشنی کا غیرمعمولی انتظام ہے۔ 1020 فانوس لگائے گئے ہیں۔ بڑے فانوس کا وزن 25 ٹن اور چھوٹے کا سات ٹن ہے۔ باقی فانوسوں کا وزن 200 کلو گرام سے لے کر 1300 کلو تک ہے- دیواری بلب 3600 اور دیگر 1144 ہیں۔ مسجد الحرام میں 140 لفٹیں ہیں۔ ان میں سے بعض سامان کے لیے خاص ہیں۔ مسجد الحرام کے توسیع والے حصے کے بڑے گنبد کا عرض 36.5 میٹر ہے۔ اونچائی 21 میٹر ہے، سطح ارض  سے اونچائی 80 میٹر تک ہے۔ متحرک گنبدوں کی تعداد بارہ ہے۔ نصب شدہ گنبد بارہ ہیں۔ عمارت میں 2 ہیلی پیڈ 65 میٹر کی اونچائی پر ہیں۔ یہ ہنگامی حالت میں استعمال کیے جاتے ہیں۔ مسجد الحرام میں 8 بڑے سائبانوں کا منصوبہ ہے۔ ان کی اونچائی  30 میٹراور قطر 53 ہے۔ 120 چھوٹے سائبان منصوبے کا حصہ ہیں۔
 

تازہ ترین