تازہ ترین

بی ہامہ صفاپورہ سڑک کی کشادگی دس برسوں سے زیر التوا

تاریخ    7 اگست 2020 (00 : 02 AM)   


ارشاد احمد
گاندربل//ناگہ بل سے بی ہامہ تک سڑک کی کشادگی شروع کی گئی تاہم رقومات کی عدم دستیابی کی بنا پر تین سال سے کام بند ہے۔ایسے ہی ایک پروجیکٹ پر 2010 میں مرکزی حکومت کے زیر انتظام سنٹرل سڑک فنڈ کے تحت گاندربل سے صفاپورہ شاہراہ کی کشادگی کا کام شروع کردیا گیا جس کے تحت شاہراہ کی کشادگی میں آنے والے مختلف علاقوں گنگرہامہ،ڈمبہ کدل،تھیورو،ڈانگر پورہ،لارسن،بارسو سمیت دیگر علاقوں میں تعمیرات اور ملکیتی زمین کو حاصل کیا گیاجس کامعاوضہ بھی ادا کردیا گیا تاہم کشادگی میں آنے والے تعمیرات کا معاوضہ ادا نہیں کیا گیا جس کے لئے لارسن، ڈانگر پورہ اور بارسو سے کئی افراد پر مشتمل وفد ضلع ترقیاتی کمشنر گاندربل سے اکثر وبیشتر ملاقی بھی ہواتاہم مسئلہ سالوں سے جوں کا توں پڑا ہے۔لارسن کے مقامی شہری محمد مقبول نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا ’’سال 2010 میں بیہامہ سے لیکر صفاپورہ تک شاہراہ کی کشادگی کے سلسلے میں جائزہ لیا گیا اور پھر شاہراہ کی کشادگی کے دائرے میں آنے والی ملکیتی زمین اور تعمیرات کو حاصل کرکے ضلع انتظامیہ نے اپنی تحویل میں لیکر زمین کا معاوضہ ادا کیا تاہم تعمیرات کا معاوضہ دس سال گزرنے کے باوجود بھی ادا نہیں کیا گیا‘‘۔اسسٹنٹ ریونیو کمشنر گاندربل سیدبصیر احمد نے اس سلسلے میں کہا ’’بیہامہ سے صفاپورہ شاہراہ کی کشادگی میں آنے والے بہت سارے دیہات ہیں اور ہمارے پاس اس پروجیکٹ کے لیے بہت قلیل پیسے وصول ہوئے ہیں تاہم اب فی الحال نصف رقم ادا کریں گے اورباقی پیسوں کو واگزار کرنے کیلئے کچھ مدت کیلئے انتظار کرنا پڑے گا‘‘۔