تازہ ترین

کورونا وائرس|مزید 13موت کی آغوش میں

متوفین کی تعداد378، متاثرین کی تعداد 20000سے پار

تاریخ    1 اگست 2020 (00 : 03 AM)   


پرویز احمد
 سرینگر //جموں و کشمیر میں کوروناوائرس سے ایک سینئر کے ائے ایس افسر سمیت مزید 13متاثرین فوت ہوگئے اور اس طرح متوفین کی تعداد بڑھکر378ہوگئی ۔ ان میں سے 28جموں جبکہ 350کشمیر صوبے سے تعلق رکھتے ہیں۔ جمعہ کو مزید 490افراد کی رپورٹیں مثبت آئیں۔ اسطرح متاثرین کی تعداد 20ہزار کا ہندسہ پار کرکے 20359ہوگئی جن میں سے 4444جموں جبکہ 15915کشمیر سے تعلق رکھتے ہیں۔ تازہ متاثرین میں سے 128سرینگر، 24بارہمولہ، 11کولگام، 8شوپیان، 21اننت ناگ، 9کپوارہ، 85پلوامہ، 29بڈگام، 22بانڈی پورہ، 10گاندربل، 43 جموں، 11 کٹھوعہ، 24راجوری، 24ادھمپورہ،ایک رام بن، 18سانبہ، 1پونچھ، 1کشتواڑ اور 20ریاسی سے تعلق رکھتے ہیں۔

 13اموات

 جموں و کشمیر میں پچھلے 24گھنٹوں کے دوران13افراد کورونا وائرس کی وجہ سے فوت ہوگئے۔ ان میں سے 6سرینگر،2پلوامہ، ایک بانڈی پورہ، ایک بڈگام ، ایک کپوارہ اور 2جموں میں فوت ہوئے۔محکمہ صحت کے ایک سینئر افسر نے بتایا ’’سرینگر سے تعلق رکھنے والے 6متوفین میں سے 4کی موت سکمز صورہ، ایک صدر اسپتال اورایک سی ڈی اسپتال میں فوت ہوگیا‘‘۔مذکورہ ڈاکٹر نے بتایا ’’ لال بازار کی 82سالہ مریض، پنزی نارہ کی 75سالہ خاتون، قمرواری سرینگر کا 62سالہ مریض، رعناواری سے تعلق رکھنے والا 57سالہ شخص سکمز صورہ میں نمونیا کی وجہ سے فوت ہوئے  جبکہ فتح کدل سرینگر سے تعلق رکھنے والی55سالہ خاتون صدر اسپتال میں فوت ہوگئی‘‘۔ سینئر ڈاکٹر نے بتایا ’’  پیرباغ سرینگر کاایک56سالہ شخص گھر میں بے ہوش ہوگیا لیکن جب اُسے صدر اسپتال سرینگر پہنچایاگیا تو وہاں ڈاکٹروں نے اسکو مردہ قرار دیا ‘‘۔انہوں نے کہا کہ حبہ کدل سرینگر سے تعلق رکھنے والا 70برس کا مریض بھی صدر اسپتال میں فوت ہوگیا۔ڈاکٹر نے بتایا ’’ پلوامہ سے تعلق رکھنے والے 2افراد کورونا وائرس کی وجہ سے فوت ہوگئے‘‘۔سینئر ڈاکٹر نے بتایا ’’پانپور سے تعلق رکھنے والی ایک54 سالہ خاتون سکمز صورہ میں جمعرات اور جمعہ کی درمیانی شب کو رات 10بجکر 45منٹ پر فوت ہوگئی‘‘۔جے وی سی بمنہ میں تعینات ایک سینئر ڈاکٹر نے نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر بتایا ’’  آریگام ترال پلوامہ سے تعلق رکھنے والا ایک 75سالہ شخص اور ایک سینئر کے ائے ایس افسر کورونا وائرس کی وجہ سے فوت ہوگئے ‘‘۔سینئر ڈاکٹر نے بتایا کہ فوت ہونے والے کے ائے ایس افسر کو 14جولائی کو اسپتال میں داخل کیا گیا اور علاج و معالجہ کے بعد اس کی رپورٹ منفی آئی تاہم اسکے بائوجود بھی وہ 31جولائی کو دیر شام گئے سانس اور حرکت قلب بند ہونے کی وجہ سے فوت ہوگئے۔ ضلع کپوارہ میں تعینات ایک سینئر افسر نے بتایا ’’ درگمولہ کپوارہ سے تعلق رکھنے والا ایک 70سالہ شخص بھی فوت ہوگیا ہے‘‘۔ بڈگام میں تعینات محکمہ صحت کے ایک سینئر افسر نے بتایا ’’ خندہ بڈگام کا 52سالہ پولیس سب انسپکٹر کورونا وائرس سے پیدا ہونے والے نمونیا کی وجہ سے فوت ہوگیا ہے‘‘۔بانڈی پورہ میں تعینات افسر نے بتایا ’’ پرے محلہ حاجن سے تعلق رکھنے والا 70سالہ معمر شخص کورونا وائرس کی وجہ سے فوت ہوگیا ہے‘‘۔ جموں صوبے میں بھی کورونا وائرس سے مزید 2افراد فوت ہوگئے ہیں ۔ جموں میں محکمہ صحت کے ایک افسرنے بتایا ’’ شکتی نگر جموں سے تعلق رکھنے والا56سالہ شخص اور گورکھا نگر جموں سے تعلق رکھنے والی خواتین کی رپورٹ مرنے کے بعد مثبت آئی ‘‘۔ 

حکومتی بیان

حکومت کی طرف سے جاری کئے گئے میڈیا بلیٹن میں بتایا گیا ہے کہ نوول کورونا وائرس کے20369معاملات سامنے آئے ہیں جن میں سے7765 سرگرم معاملات ہیں ۔ اب تک12217اَفراد شفایاب ہوئے ہیں ۔جموں وکشمیر میں کوروناوائرس سے مرنے والوں کی مجموعی تعداد377تک پہنچ گئی ،جن میں سے 349کا تعلق کشمیر صوبہ سے اور28کاتعلق جموں صوبہ سے ہیں۔اِس دوران جمعہ کو مزید375مریض صحتیاب ہوئے ہیںجن میںجموں صوبے کے78اور کشمیر صوبے کے 297اَفراد شامل ہیں ، جن کو جموں و کشمیر کے مختلف ہسپتالوں سے رخصت کیا گیا۔بلیٹن میں مزید کہا گیا ہے کہ اب تک 637515ٹیسٹوں کے نتائج دستیاب ہوئے ہیں جن میں سے  31جولائی2020ء کی شام تک 617156نمونوں کی رِپورٹ منفی پائی گئی ہے ۔علاوہ ازیں اب تک368806افراد کو نگرانی میں رکھا گیا ہے جن کا سفر ی پس منظر ہے اور جو مشتبہ معاملات کے رابطے میں آئے ہیں۔ ان میں 46478اَفراد کو ہوم قرنطین میں رکھا گیا ہے جس میں سرکار کی طرف سے چلائے جارہے قرنطین مراکز بھی شامل ہیں ۔ اس کے علاوہ06اَفراد کو ہسپتال قرنطین میں رکھا گیا ہے۔7763کو ہسپتال آئیسولیشن میں رکھا گیا ہے جبکہ40732 اَفراد کو گھروں میں نگرانی میں رکھا گیا ہے۔اسی طرح بلیٹن کے مطابق273448اَفرادنے 28روزہ نگرانی مدت پوری کی ہے۔
 

تازہ ترین