ریاستی درجے کی بحالی

پینتھرس پارٹی کا5 اگست کو احتجاج کرنے کا اعلان

تاریخ    26 جولائی 2020 (00 : 03 AM)   


جموں (یو این آئی) نیشنل پنتھرس پارٹی چیئرمین ہرش دیو سنگھ نے کہا ہے کہ5اگست کو جموں و کشمیر کو ریاست کا درجہ واپس دینے کے حق میں احتجاج کیا جائیگا۔ انہوں نے کہا کہ جموں و کشمیر کا درجہ گھٹا کر یونین ٹریٹری بنانے کے بعد جموں کے لوگوں کے ساتھ کئے گئے وعدے پورے نہیں کئے گئے ہیں۔انہوںنے کہاکہ’ 5اگست 2019 کو جموں و کشمیر کو ریاست کے درجے سے محروم کر کے دو وفاقی حصوں میں منقسم کیا گیا، ایک سال پورا ہونے کو ہے، جہاں بی جے پی اس دن جشن منائے گی وہیں پنتھرس پارٹی اس دن تمام ضلع ہیڈ کواٹروں پر احتجاج درج کرے گی کہ ہمیں ریاست کا درجہ واپس دیا جائے'۔ہرش دیو نے کہا کہ 'جموں و کشمیر، ہندوستان میں دو سو سال پرانی ڈوگرہ ریاست تھی، اس کا درجہ گھٹا کے اس کو یونین ٹریٹری بنایا گیا'۔ان کا کہنا تھا: 'جموں وکشمیر کو یونین ٹریٹری بنانے کے بعد جموں کے لوگوں کے ساتھ ترقی کے نام پر بڑے بڑے وعدے کئے گئے لیکن ایک بھی وعدہ پورا نہیں کیا گیا، بی جے پی کے بر سر اقتدار آنے کے بعد تمام بڑے پروجیکٹوں پر کام ٹھپ ہے صرف ٹول پلازے قائم کئے جا رہے ہیں'۔ہرش دیو نے کہا کہ بے روزگاری بڑھ رہی ہے جس کی وجہ سے نوجوان سڑکوں پر آرہے ہیں۔
 

تازہ ترین