تازہ ترین

سکولی بچوں کیلئے کمیونٹی کلاسوں کا انعقاد خطرناک: حکیم

تاریخ    14 جولائی 2020 (00 : 03 AM)   


سرینگر//پیپلز ڈیموکریٹک فرنٹ چیئرمین حکیم محمد یاسین نے حکومت خاص کر محکمہ تعلیم کو طلاب کیلئے صرف آن لائن کلاسوں کے زریعہ تعلیم دینے کی صلاح دیتے ہوئے خبر دار کیا کہ عالمی وبائی بیماری کورونا وائرس کے بیچ بچوں کی پڑھائی کیلئے کمیونٹی کلاس روم  منعقد کرانے کے مضر اثرات نکل سکتے ہیں۔ ایک بیان میں حکیم یاسین نے حکومت پر زور دیا کہ بچوں کی تعلیم کے لئے موجودہ آن لائن کلاسوں کے نظام کو مزید بہتر اور وسیع بنایا جائے اور بچوں کی پڑھائی کیلئے سکولوں کے اندر یا باہر کمیونٹی کلاسز منعقد کرنے سے پرہیز کیا جانا چاہیے۔حکیم نے کہا کہ بچوں کی زندگی کی سلامتی و حفاظت پہلی ترجیح ہے اسکے بعد ان کی تعلیم۔ انہوںنے کہا کہ دیکھا گیا ہے کہ عام طور پر دسویں جماعت تک کے بچے طفل مزاج ہوتے ہیں جو مختلف احتیاطی ہدایا ت وضوابط پر سختی سے عمل کرنے میں غیر سنجیدہ ہوتے ہیں،اس لئے موجودہ وباء کے بیچ سکولوں یا آس پاس میں بچوں کو کمیونٹی کلاسز کے لئے گھروں سے باہر بلانا بہت ہی خطرناک ثابت ہوسکتا ہے۔ انھوں نے کہا کہ بچوں کے اجتماع میں ان سے سماجی دوری کی توقع رکھنا ناممکن ہے۔ حکیم یاسین نے کورونا وائرس کے پھیلاو کو روکنے کے لئے کشمیر کے کچھ اضلاع میں لاک ڈاون پھر سے لاگو کرنے کے حکومت کے فیصلے کی سراہنا کرتے ہوئے معیاری عملیاتی طریقہ کار (ایس او پی) کی خلاف ورزی کرنے والوں کیلئے سخت کاروائی کرنے کی مانگ کی ہے۔