تازہ ترین

امرناتھ یاترا پرپابندی کی درخواست

عدالت عظمیٰ کاسماعت کرنے سے انکار

تاریخ    14 جولائی 2020 (00 : 03 AM)   


یواین آئی
نئی دہلی// سپریم کورٹ نے اس سال کورونا وائرس کی عالمی وبا کے پیش نظر سالانہ امرناتھ یاترا پر پابندی عائد کرنے کی درخواست پر سماعت سے انکار کردیا۔جسٹس ڈی وائی چندرچور، جسٹس اندو ملہوترا اور جسٹس کے ایم جوزف کی بنچ نے امرناتھ بارفانی لنگر آرگنائزیشن اور دیگر فریقوں کی درخواست کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ یاترا کے انعقاد اور اس کے دوران کی جانے والی احتیاطی تدابیر کے بارے میں فیصلہ کرنا حکومت کا کام ہے ۔ جسٹس چندرچوڑ نے کہا ،’’ہم ضلع انتظامیہ کے کام میں مداخلت نہیں کرسکتے ہیں‘‘۔ عدالت عظمی نے کہا کہ جموں وکشمیر اب ایک مرکزکے زیر انتظام خطہ بن گیا ہے ، جہاں کورونا وائرس کی صورتحال سے نمٹنے کے لیے مرکزی حکومت کے رہنما اصول لاگو ہیں، اس لیے اس معاملے میں مداخلت کرنا مناسب نہیں ہوگا۔واضح رہے کہ امرناتھ برفانی لنگر آرگنائزیشن نے ایڈوکیٹ امیت پال کے توسط سے ایک درخواست دائر کی تھی جس میں امرناتھ یاترا پر پابندی کے لئے ہدایات دینے کی درخواست کی گئی تھی۔ درخواست گزار نے کہا کہ ہر سال کم سے کم 10 لاکھ افراد امرناتھ یاترا میں شریک ہوتے ہیں اور اس بار ان میں کورونا وائرس کے انفیکشن کا خطرہ زیادہ رہے گا۔ ایسی صورتحال میں امرناتھ یاترا کو رکنے کی ہدایت دی جانی چاہئے ۔درخواست گزار نے برفانی بابا امر ناتھ کے رشن کو انٹرنیٹ اور ٹی وی پر براہ راست دکھانے کا بھی مطالبہ کیا تھا۔