تازہ ترین

ایک دن میں28ہزار سے زائدنئے معاملے سامنے | ملک میں متاثرین کی تعداد ساڑھے8لاکھ تک پہنچ گئی

تاریخ    13 جولائی 2020 (30 : 01 AM)   


یو این آئی
نئی دہلی// ملک میں کورونا انفیکشن کے روزانہ کیسز بہت تیزی سے بڑھ رہے ہیں اور پچھلے 24 گھنٹوں میں ساڑھے 28 ہزار سے زیادہ معاملے درج کیے گئے ہیں ، جس سے متاثرہ افراد کی تعداد قریب 8.50 لاکھ ہوگئی ہے ۔اتوار کے روز مرکزی صحت اور خاندانی بہبود کی وزارت کے جاری کردہ اعداد و شمار کے مطابق ، گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ملک بھر میں کورونا انفیکشن کے 28ہزار637 نئے کیس رپورٹ ہوئے ہیں ، جو ایک دن میں سب سے زیادہ ہیں اور متاثرہ افراد کی تعداد 8لاکھ49ہزار553 رہی ہے ۔گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 551 اموات ہونے سے اس بیماری سے مرنے والوں کی تعداد بڑھ کر 22ہزار674 ہوگئی ہے ۔ کورونا وائرس سے سب سے زیادہ متاثر مہاراشٹر میں پچھلے 24 گھنٹوں کے دوران انفیکشن کے سب سے زیادہ 8ہزار139 نئے معاملے ریکارڈ ہوئے ہیں ، جس کے بعد یہاں متاثرہ افراد کی تعداد بڑھکر 2لاکھ46ہزار600 ہوگئی۔ اس عرصے کے دوران ریاست میں 223 افراد لقمہ اجل بن چکے ہیں جس کی وجہ سے مرنے والوں کی تعداد 10ہزار116 ہوگئی ہے ۔ تمل ناڈو میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ، متاثرین کی تعداد 3ہزار965 بڑھ کر 1لاکھ34ہزار226 ہوگئی ہے اور اسی مدت کے دوران 69 افراد کی موت ہونے سے یہ تعداد بڑھ کر 1ہزار898 ہوگئی ہے ۔قومی دارالحکومت دہلی میں کورونا وائرس کے حالت اب کچھ کنٹرول میں ہے اور یہاں انفیکشن کے معاملات میں اضافے کی شرح میں قدرے کمی واقع ہوئی ہے ۔ دارالحکومت میں اب تک 1لاکھ10ہزار921 افراد کورونا سے متاثر ہوئے ہیں اور اس کی وجہ سے اموات کی تعداد بڑھ کر 3ہزار334 ہوگئی ہے ۔گجرات کوویڈ ۔19 کے متاثرین کی تعداد کے لحاظ سے چوتھے نمبر پر ہے ، لیکن مرنے والوں کی تعداد میں یہ مہاراشٹر اور دہلی کے بعد تیسرے نمبر پر ہے ۔ گجرات میں ، متاثرہ افراد کی تعداد 40 ہزارکو پار کر چکی ہے اور 2ہزار032 افراد لقمہ اجل بن چکے ہیں۔ جنوبی ریاست کرناٹک میں ، 36ہزار216 افراد متاثر ہوئے ہیں اور 613 افراد ہلاک ہوگئے ہیں۔آبادی کے لحاظ سے ملک کی سب سے بڑی ریاست اتر پردیش میں اب تک کورونا انفیکشن کے 35ہزار092 معاملے رپورٹ ہوئے ہیں اور وائرس سے 913 افراد لقمہ اجل بن چکے ہیں۔ تلنگانہ میں ، کورونا انفیکشن کے معاملات بھی بہت تیزی سے بڑھ رہے ہیں۔ تلنگانہ میں ، متاثرہ افراد کی تعداد 33ہزار402 تک پہنچ چکی ہے اور 348 افراد لقمہ اجل بن چکے ہیں جبکہ 20ہزار919 افراد اب تک اس وبا سے ٹھیک ہوچکے ہیں۔مغربی بنگال میں ، 28ہزار453 افراد کورونا وائرس سے متاثر ہوئے ہیں اور 906 افراد ہلاک اور 17ہزار959 افراد اب تک بازیاب ہوئے ہیں۔ آندھرا پردیش میں 27ہزار235 افراد متاثر ہوئے ہیں اور اموات کی تعداد 309 ہوگئی ہے ۔ راجستھان میں بھی ، کورونا انفیکشن کی تعداد 23ہزار748 تک جا پہنچی ہے ۔
 
 
 

۔24گھنٹوں میں 2لاکھ 80ہزار نمونوں کی جانچ

 
نئی دہلی// کووڈ۔19کی جانچ کو وسیع بناتے ہوئے ہر روز نمونوں کی جانچ میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے۔ گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران ملک میں 2,80,151نمونوں کی جانچ کی گئی ہے۔اب تک جانچ کئے گئے نمونوں کی مجموعی تعداد1,15,87,153ہے۔ ان کوششوں کے نتیجہ میں ہندستانی فی دس لاکھ پر ٹیسٹ کی شرح 8396.4ہوچکی ہے۔ملک میں اس وقت سرکاری شعبہ کی 850لیباریٹریاں اور پرائیویٹ شعبہ کی 344لیبارٹریاں (مجموعی طورپر1194 لیبایرٹریاں) ہیں۔جن میں ریل ٹائم آر ٹی پی سی آر پر مبنی ٹیسٹ لیبارٹریاں 624(سرکاری 388، پرائیویٹ 236)، ٹو این ٹی پر مبنی ٹیسٹ لیباریٹریاں 427(سرکاری 427، پرائیویٹ 45) اور سی بی نیٹ پر مبنی ٹیسٹ لیبارٹریاں 98(سرکاری 35، پرائیویٹ 63) ہیں۔ گزشتہ چوبیس گھنٹوں میں کووڈ۔19کے مجموعی طورپر 19,235مریض ٹھیک ہوئے ہیں اور اس کے نتیجہ میں اتوار تک کووڈ۔19کے ٹھیک ہونے والے معاملات کی تعداد بڑھ کر 5,34,620ہوگئی ہے۔ اس وقت (ریکوری) کی شرح بڑھ کر 62.93فیصد ہوگئی ہے۔مرکزی حکومت کے مرکوز اور مربوط کوششوں نیز ریاستوں /مرکز کے زیرانتظام ریاستوں کی حکومتوں کے ساتھ مل کر کورونا معاملات کی جلد از جلد شناخت کرنے، صحیح وقت علاج کرنے سے ملک میں ایسے مریضوں کی ٹھیک ہونے کی تعداد میں زبردست اضافہ ہوا ہے۔
 
 

انوپم کھیر کی ماں سمیت گھر میں4لوگ متاثر

 
ممبئی /امیتابھ بچن کو کورونا ہونے کی خبر کے بعد اب بالی ووڈ اداکار انوپم کھیرکے گھر سے چونکانے والی خبر آئی ہے۔ ان کی والدہ اور بھائی سمیت گھر کے کل چار لوگ کورونا پازیٹیو  پائے گئے ہیں۔ ان میں ان کے بھائی راجو کی بیٹی یعنی انوپم کھیر کی بھتیجی بھی شامل ہیں۔ اس بات کی جانکاری خود انوپم کھیر نے شیئر کی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ والدہ کو اسپتال میں بھرتی کروادیا گیا ہے۔انوپم کھیر نے سوشل میڈیا پر ایک پوسٹ شیئر کرتے ہوئے اس پورے معاملہ کی جانکاری دی۔ اس پوسٹ میں انوپم کھیر کا ایک ویڈیو بھی ہے۔ اس ویڈیو میں وہ بتارہے ہیں کہ گزشتہ کچھ دنوں سے میری والدہ کو بھوک نہیں لگ رہی تھی ، کچھ بھی نہیں کھا رہی تھیں ، وہ سوتی رہتی تھیں تو ہم نے ڈاکٹر کے کہنے پر ان کا بلڈ ٹیسٹ کروایا۔