این آئی اے کا سابق ڈی ایس پی دیوندر سنگھ کیس میں چارج شیٹ پیش

تاریخ    6 جولائی 2020 (19 : 05 PM)   


نیوز ڈیسک
سرینگر//قومی تحقیقاتی ایجنسی (این آئی اے) نے پیر کو سابق ڈی ایس پی دیوندر سنگھ ،حزب جنگجو نوید بابو اور دوسرے ملزمان کیخلاف چارج شیٹ پیش کردیا۔
این اے آئی نے ایک بیان جاری کرتے ہوئے کہا کہ جموں میں پیش کئے گئے اس چارج شیٹ میں چھ افراد کو ملزم ٹھہرایا گیا ہے جن میں حزب المجاہدین جنگجو سید نوید مشتاق عرف نوید بابو،عرفان شفیع میر عرف ایڈوکیٹ، سابق ڈی ایس پی دیوندر سنگھ، حزب جنگجورفیع احمد راتھر،سابق ایل او سی ٹریڈر تنویر احمد وانی اور نوید بابو کا بھائی سید عرفان احمد شامل ہیں۔
یاد رہے کہ بنیادی طور پر اس کیس کے سلسلے میں قاضی گنڈ پولیس تھانے میں کیس درج تھا جہاں دیوندر سنگھ کو حزب جنگجوﺅں کو وادی سے باہر لیجانے کی کوشش کے دوران ایک گاڑی سے گرفتار کیا گیا۔دیوندر کی گرفتاری کا واقعہ 11 جنوری2020کو قاضی گنڈ کے میر بازار علاقے میں پیش آیا۔
 بعد ازاں این آئی اے نے17جنوری کو کیس کی تحقیقات کا کام ہاتھ میں لیکر کیس کو جموں منتقل کیا۔
کیس کی تحقیقات کے دوران وادی کشمیر میں15مقامات پر چھاپے مارے گئے اور دیگر ملزمان کی گرفتاریاں عمل میں لائی گئیں۔
چارج شیٹ کے مطابق دیوندر سنگھ نئی دلی میں مقیم پاکستانی ہائی کمشنر کے ساتھ بھی رابطے میں تھا اور اس کیلئے انہوں نے محفوظ سوشل میڈیا اکاﺅنٹ کھول رکھے تھے۔

تازہ ترین