تازہ ترین

لچھمن پورہ بٹہ مالو اور ملحقہ علاقوں میں پانی کی شدید قلت،لوگ پریشان

تاریخ    6 جولائی 2020 (00 : 02 AM)   


نمائندہ عظمیٰ
سرینگر //لچھمن پورہ بٹہ مالو اور ملحقہ علاقوں میں پینے کے صاف پانی کی شدید قلت کا سامنا ہے جس کے نتیجے میں لوگوں کو سخت مشکلات کا سامنا کرنا پڑرہا ہے۔ مقامی لوگوں نے متعلقہ محکمہ پر غفلت شعاری کا الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ گرمیوں کے ان ایام میں آبادی پانی کی ایک ایک بوند کیلئے ترس رہی ہے جبکہ کئی بار محکمہ کو اس بارے میں آگاہ کرنے کے باوجود بھی اس سلسلے میں کوئی کارروائی نہیں کی گئی۔ مقامی خواتین کا کہنا ہے کہ انہیں نہ صرف پینے کیلئے دکانوں سے بند بوتلوں کا پانی خریدنا پڑرہا ہے بلکہ دوسرے محلوں میں پانی لانے کیلئے جانا پڑتا ہے ۔انہوں نے کہا کہ اکثر جیسے ہی گرمیاں شرو ع ہوتی ہیں تو انہیں پانی کی سپلائی سے محروم رکھا جاتا ہے ۔لچھمن پورہ کے لوگوں کا کہنا ہے کہ انہوں نے پانی کی قلت کیخلاف متعدد بار احتجاج کیا اورمعاملہ انتظامیہ کی نوٹس میں بھی لایا کہ علاقے کے لوگوں کو پانی فراہم کیا جائے تاکہ مستقبل میں انہیں مشکلات کا سامنا نہ کرنا پڑے لیکن محکمہ جل شکتی ٹس سے مس نہیں ہو رہا ہے جس سے لوگ پریشان ہیں ۔محکمہ جل شکتی کے چیف انجینئر کشمیر افتخار حسن نے کشمیر عظمیٰ کے ساتھ بات کرتے ہوئے اس بات کا اعتراف کیا ہے کہ گرمی کی وجہ سے شہر کے کچھ ایک علاقوں میں پینے کے صاف پانی کی قلت پیدا ہوئی ہے اور بہت جلد اس قلت کو دور کیا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ بٹہ مالو میں پانی کی قلت اس وجہ سے پائی جاتی ہے کیونکہ دوسرے علاقوں میں پانی کا غلط استعمال ہوتا ہے اور محکمہ نے اپنی چکنگ سکارڈ ٹیموں کو تشکیل دیا ہے جو پانی کے غلط استعمال پر کارروائی کرتی ہے۔ انہوں نے یقین دلایا کہ اگلے کچھ دنوں میں بٹہ مالو اور اس کے ملحقہ علاقوں میں پانی کی سپلائی کو بہتر بنایا جائے گا۔
 
 

تازہ ترین