جموں وکشمیر اور لداخ کے ملازمین کے مسائل

جموں میں کیٹ بنچ کے قیام کو منظوری مل گئی

تاریخ    29 مئی 2020 (00 : 03 AM)   


سید امجد شاہ
جموں //مرکزی حکومت نے اپنے پہلے نوٹیفکیشن میں ترمیم کرتے ہوئے جموں وکشمیر اور لداخ کے ملازمین کے مسائل کی سنوائی کیلئے جموں میں سنٹرل ایڈمنسٹریٹو ٹریبونل کے قیام کو منظوری دی ہے جو ملک بھر میں 18واں ایسا ٹریبونل ہوگا۔اس سلسلے میں حکومت ہند نے ایڈمنسٹریٹوٹریبونلز ایکٹ 1985کی شق5ذیلی شق(7)کے تحت جمعرات کو ایک تازہ نوٹیفکیشن جاری کیاہے جس کے مطابق جموں و سرینگر ایسی جگہیں ہوں گی جہاں عمومی طور پر ٹریبونل کی برانچ کام کرے گی اور اس برانچ کے ذریعہ مرکزی اکائیوں جموں وکشمیر اور لداخ کے ملازمین کے مسائل کی سنوائی کی جائے گی ۔قبل ازیں جموں وکشمیر اور لداخ کو چندی گڑھ ٹریبونل کے ساتھ جوڑاگیاتھا جس پر وکلاء برادری اور دیگر متعلقین کی طرف سے شدید برہمی کا اظہار کیاگیا جس کے بعد اب مرکزی حکومت کو اپنے پرانے نوٹیفکیشن میں تبدیلی کرناپڑی ہے ۔ بار ایسو سی ایشن جموں کے صدر ابھینو شرما نے اس حوالے سے کہا’’جموں CATنام سے ایک علیحدہ 18واں بنچ قائم کیاگیاہے جس کے ذریعہ جموں، کشمیر اور لداخ کے ملازمین کے مسائل کی سنوائی کی جائے گی‘‘۔انہوں نے کہاکہ جموں برانچ کا ہر گز یہ مطلب نہیں کہ یہ صرف جموں کیلئے ہے بلکہ یہ پورے جموں وکشمیر اور لداخ کے لئے ہے جیساکہ چندی گڑھ بنچ پنجاب، ہریانہ اور ہماچل پردیش کا احاطہ کرتاہے ۔اس سے قبل ملک بھر میں ٹریبونل کی 17شاخیں ہیں۔ شرما نے مزید بتایا’’بنچ کا چیئرمین ہی یہ دیکھے گاکہ کتنی اسامیاں درکار ہیں، وہ مزید اسامیوں کو معرض وجود میں لاسکتاہے، وہ مزید ممبران نامزد کرسکتاہے،یہ ایک خود مختاربنچ ہے ‘‘۔ادھرسنٹرل ایڈمنسٹریٹو ٹریبونل کی جموں برانچ 8جون سے اپناکام کاج وزارت روڈ جموں دفتر سے شروع کرے گا جس کیلئے حکومت کی طرف سے 20ملازمین کی تعیناتی بھی عمل میں لائی گئی ہے ۔ معاملات کی سنوائی میں مدد کیلئے نئی دہلی اور سنٹرل ایڈمنسٹریٹو ٹریبونل چندی گڑھ کی برانچ سے ملازمین تعینات کئے گئے ہیں جن میں ڈپٹی رجسٹرار سورت سنگھ، 3 پرائیویٹ سیکریٹری، 2 سیکشن افسر،2اسسٹنٹ سیکشن افسر، 2سینئر اسسٹنٹ،3جونیئر اسسٹنٹ ،سٹاف کار ڈرائیور اور دیگران شامل ہیں ۔
 

راکیش ساگر اولین جوڈیشل ممبر تعینات 

جموں //حکومت نے جموں CATبنچ کیلئے پہلے جوڈیشل ممبر کی تعیناتی عمل میں لائی ہے ۔ اس سلسلے میں ایک حکمنامہ جاری کیاگیاہے جس کے مطابق اتر پردیش کے آلہ آباد بنچ کے ممبر راکیش ساگر کو تبدیل کرکے جموں بنچ میں تعینات کیاگیاہے ۔یہ حکمنامہ پرنسپل بنچ، پرنسپل رجسٹرار گوتم موندل کی طرف سے جاری ہواہے ۔حکمنامہ کے ذریعہ کہاگیاہے کہ راکیش ساگر کو اپنے عہدے کو 8جون کو سنبھالناہوگا۔
 

پنچایتوں کی 2ہزار اسامیاں پُر کی جائیں گی

سرینگر// انتظامی کونسل نے اس بات کا فیصلہ کیا ہے کہ پنچایت اکاونٹنٹوں کی2ہزار اسامیوں کو فاسٹ ٹریک بنیادوں پر پُر کیا جائے گا۔ انتظامی کونسل میٹنگ میں پنچایتی اکاونٹنٹوں کی2ہزار اسامیوں کو پُر کرنے کے فیصلے کوہری جھنڈی دی گئی۔ان اسامیوں کو پُر کرنے کیلئے بھرتی عمل کو  جموں کشمیر کے اقامتی شہریوں تک ہی محدود رکھا گیا ہے،اور متعلقہ ضوابط کے تحت انہیں پر کیا جائے گا۔ان اسامیوں میں امیدواروں کو سروس سلیکشن بورڈ کی وساقت سے تحریری بنیادوں پر لئے گئے امتحانات کے بعد اہلیت کی بنیاد پر منتخب کیا جائے گا،اور کوئی بھی انٹرویو نہیں ہوگا۔
 

تازہ ترین