عید الفطر آج

کورونا وائرس کی بدولت اجتماعی صورت میں نماز عید ادا نہیں کی جائے گی

24 مئی 2020 (00 : 03 AM)   
(      )

بلال فرقانی

 سعودی عرب میں بھی آج تقریب منائی جارہی ہے

 
سرینگر//پچھلے سال برصغیر ہندوپاک میں عید الفطر کی تقریب ایک ساتھ منائی گئی تاہم امسال ایسا ممکن نہیں ہوسکا۔ جہاں کرگل میں سنیچر کو کچھ علاقوں میں عید الفطر منائی گئی وہیں دلی کے شاہی امام نے اعلان کیا کہ عیدالفطر سوموار کو منائی جائے گی کیونکہ بھارت کے کسی شہر میں شوال کا چاند نظر نہیں آیا۔ یہ امر قابل ذکر ہے کہ بھارت میں کوئی رویت ہلال کمیٹی نہیں ہے۔ سنیچر کو کیرالہ اور کرناٹک کے ساحلی علاقوں کے لوگوں نے پہلے ہی یہ اعلان کیا تھا کہ عیدالفطر سعودی عرب کے ساتھ اتوار کو منائی جائے گی۔ وادی کشمیر میں بھی اتوار کو ہی عیدالفطر منائی جارہی ہے ۔ اس سلسلے میں وادی کے کم و بیش بڑی مساجد  اور خانقاہوں کے علاوہ امام باڑوں میں اتوار کو عید الفطر منانے کے اعلانات کئے گئے ۔ ان اعلانات میں یہ بھی کہا گیا کہ وادی کے کئی علاقوں میں شوال کا چاند نظر آیا ہے۔ خیال رہے کہ سعودی عرب سمیت خلیجی ممالک اوردیگرخطوں میں جمعہ کو شوال کاچاندنظرنہ آنے کے پیش نظرعیدالفطر اتوار کوہی منانے کا اعلان کیا گیا ہے ۔ خلیجی ممالک میں سعودی عرب کے ساتھ ہی عید اور ماہ رمضان کا اہتمام کیا جاتا ہے۔ پچھلے سال  عیدالفطرکی تقریب سعیدبھارت اور پاکستان سمیت جنوب ایشیائی خطے کے دیگرممالک میں ایک ساتھ منائی گئی تھی ۔یہ بات قابل ذکر ہے کہ عید الفطر کے موقعے پر عید نماز کے اجتماعات منعقد نہ کرنے کا اعلان پہلے ہی کیا جاچکا ہے۔ متحدہ مجلس علماء نے تین روز قبل یہ اعلان کر رکھا ہے کہ وادی کی کسی بھی مسجد ، خانقاہ، درگاہ، امام باڑہ یا پھر عیدگاہوں میں اجتماعی صورت میں نماز عید ادا نہیں کی جائے گی بلکہ لوگوں کو صلاح دی گئی کہ وہ حکومتی احکامات پر عمل پیرا ہوکر گھروں میں ہی عید کی نماز ادا کریں۔ 
 

لیفٹیننٹ گورنر کی لوگوں کو مبارک باد

نیوز ڈیسک
 
 جموں//لیفٹیننٹ گورنر گریش چندر مرمونے جموںوکشمیر کے لوگوں کو عیدالفطر کے موقعہ پر مبارک باد پیش کی۔اپنے پیغام میں لیفٹیننٹ گورنر نے کہا کہ یہ تہوار بھارت کے مخلوط ثقافت کی ایک مثال ہے ۔اُنہوں نے تمنا ظاہر کی کہ یہ تہوار بین مذہبی رواداری کو ترقی دے اور قائم رکھے اور تمام مذاہب کے ماننے والوں میں بھائی چارے   یگانگت اور امن و آشتی کے اقدار پیدا کریں۔لیفٹیننٹ گورنر نے اُمید ظاہرکی کہ ماہِ رمضان جوکہ صوم و صلوٰۃ ، صدقہ و خیرات کا مہینہ ہے جموںوکشمیر کی مخلوط روایات کو مزید استحکام بخشے گا۔ انہوں نے جموںوکشمیر کے لئے امن ، ترقی اور خوشحالی کے لئے دعاکی۔ لیفیٹننٹ گورنر نے موجودہ صورتحال کے پیش نظر لوگوں کو عید منانے کے دوران اِنتظامیہ کی جانب سے جاری رہنما خطوط اور قواعد و ضوابط پر عمل پیرا رہنے کے لئے کہا ۔

تازہ ترین