کووِڈ-19-کی وباء

10 اپریل 2020 (00 : 01 AM)   
(      )

منی گاہ ہایہامہ،اندرہامہ ،مقام شاہ ولی درگمولہ کپواہ ریڈ زون قرار،لوگوں کو گھروں میں ہی رہنے کی تلقین 

اشرف چراغ 
 
کپوارہ//وادی میں کورونا ائرس میں مبتلاء مریضوں کی تعداد میں ہر گزرتے دن کے ساتھ اضافہ ہورہا ہے جس کے نتیجے میں لوگو ں میں سخت فکر و تشویش لا حق ہوگئی ہے ۔ کپوارہ ضلع میں بھی گزشتہ دوروز میں 2مریضو ں کے کووڈ-19-ٹیسٹ مثبت آئے ،اس سے قبل باغ بیلا کرناہ،ہری اور ماگام ہندوارہ کے چھ مریضوں کے ٹیسٹ مثبت آئے،اس کے بعد ان علاقوں کو ریڈ زون قراردیا گیا۔منی گاہ میں بدھ کے روز ایک مریض جبکہ مقام شاہ ولی سے ایک اور مریض کے ٹیسٹ مثبت آنے کے بعد منی گاہ ہایہامہ اور اندر ہامہ کے علاوہ مقام شاہ ولی درگمولہ کو ریڈ زون لسٹ میں شامل کیا گیا اور ان علاقوں میں لوگو ں کے نقل و حمل پر سختی سے پابندی عائد کی گئی ۔ضلع انتظامیہ نے ان علاقوں کے لوگو ں سے کہا کہ وہ اپنی نقل و حمل محدود کریں اور اپنے ہی گھرو ں میں رہے ۔منی گاہ اور مقام شاہ ولی کے مریضوں سے متعلق ان کی سفری تفصیلات میں بتا یا گیا کہ ان کا رابطہ نظام الدین دلی میں رہا ہے ۔اس دوران ضلع ترقیاتی کمشنر کپوارہ کی ہدایت پر دور دراز علاقہ کرناہ کے ڈگری کالج ٹنگڈار میں کورونا وائرس کے مریضوں کے لئے ان کے خون کے نمونہ حاصل کرنے کے لئے کلکشن سنٹر قائم کیا گیا ، تاکہ اس دوردراز علاقہ کے لوگو ں کے نمونوں کو حاصل کرنے کے لئے کپوارہ منتقل نہیں کرنا پڑے ۔اس سلسلہ میں کپوارہ سے ایک ٹیکنکل ٹیم کرناہ پہنچ گئی جہا ں سب ڈویژنل مجسٹریٹ کرنا ہ ڈاکٹر بلال محی الدین نے ٹیم کے ہمراہ ڈگری کالج میں انتظامات کو حتمی شکل دی ۔
 

جموں میں 2 انڈور اسٹیڈیم قرنطینہ مراکز میں تبدیل ہونگے

یو این آئی
 
جموں// کورنا وائرس کے تیزی سے پھیلاؤ کے پیش نظر حکومت یہاں دو انڈرو اسٹیڈیموں کو 150 بستروں پر مشتمل قرنطینہ سینٹروں میں تبدیل کررہی ہے۔اس سلسلے میں سینئر ڈاکٹروں، انتظامیہ کے اعلیٰ عہدیداروں اور فوجی افسرں کی ایک ٹیم نے جمعرات کی صبح یہاں مولانا آزاد اسٹیڈیم اور انڈور کمپلیکس بھگوتی نگر کا معائنہ کیا۔جموں وکشمیر اسپورٹس کونسل کے سکریٹری جاوید نسیم نے بتایا کہ ملک کے دوسرے حصوں کی طرح جموں میں بھی انڈور اسٹیڈیموں کو قرنطینہ سینٹر وں میں تبدیل کیا جارہا ہے۔انہوں نے کہا،’’ہم نے لیفٹیننٹ گورنر کے مشیر فاروق خان کی ہدایات پر تمام انفراسٹرکچر کو متعلقہ ضلع انتظامیوں کے پیش خدمت رکھا ہے اور وہ اس کو ضرورت پڑنے پر استعمال میں لاسکتے ہیں‘‘۔موصوف سکریٹری نے کہا کہ مولانا آزاد اسٹیڈیم میں 80 بستروں پر مشتمل قرنطینہ سینٹر قائم کیاجائے گا جبکہ  بھگوتی نگر اسٹیڈیم میں 70 بستروں پر مشتمل قرنطینہ سینٹر قائم ہوگا۔انہوں نے مزید کہا کہ بلاور، ریاسی، راجوری، پونچھ، بانڈی پورہ اور سری نگر میں واقع تمام انڈرو کمپلیکسز حکومت کی تحویل میں ہیں اور وہ انہیں وقت ضرورت قرنطینہ مراکز میں تبدیل کرسکتے ہیں۔قبل ازیں جموں میں ریلوے محکمہ نے چھ ریل ڈبوں کو قرنطینہ مراکز کے بطور تیار رکھا۔
 

ترال میں سرکاری احکامات کی خلاف وزی

پولیس نے بھیڑکوہلکا لاٹھی چارج کرکے تتر بتر کیا

سید اعجاز
 
ترال//ترال میں پولیس نے لوگوں کو سرکاری احکامات پرمکمل عمل کرنے کی اپیل کرتے ہوئے قصبے میں مختلف مقامات پرجمع بھیڑ کو تتر بتر کرنے کے لئے ہلکا لاٹھی چارج کیا۔قصبہ ترال میں پولیس نے جمعرات کو قصبے کے ترال بالا اور پائین میں مختلف مقامات جمع بھیڑ کو سرکاری احکامات کی خلاف ورزی کرنے کی پاداش میں ہلکا لاٹھی چارج کر کے تتر بتر کیا۔پولیس نے بتایا کہ مذکورہ لوگ خود کی زندگیوں کے ساتھ ساتھ دوسروںکی جانوں کے ساتھ کھیل رہے ہیں ۔انہوں نے عوام سے سماجی دور ی کو بنائے رکھنے اور سرکاری احکامات پر مکمل عمل کرنے کی اپیل کی ہے تاکہ علاقہ اس مہلک عالمگیری وباء سے پاک رہے ۔ 

تازہ ترین