کووِڈ۔19 صورتحال : غریب کلیان یوجنا کی عمل آوری اور مرکزی ریلیف پیکیج

کابینہ سیکریٹری کی ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے چیف سیکریٹریوں سے مشاورت

2 اپریل 2020 (00 : 01 AM)   
(      )

نیوز ڈیسک
جموں//کابینہ سیکریٹری راجیو گابا نے تمام ریاستوں اور مرکزی زیر انتظام والے علاقوں کے چیف سیکریٹریوں کے ساتھ ایک ویڈیو کانفرنسنگ کے دوران مرکزی سرکار کی طرف سے غریبوں کی راحت کیلئے پردھان منتری غریب کلیان یوجنا کے تحت جاری کئے گئے ریلیف پیکیج کی تقسیم کار ی کے عمل کا جائزہ لیا تاکہ یہ لوگ کامیابی کے ساتھ کورونا وائرس کا مقابلہ کر سکے۔کابینہ سیکرٹری نے ریاستوں / یوٹیز سے کہا کہ وہ پی ایم جی کے وائی ریلیف پیکیج کی تقسیم کاری کے لئے تیار رہیں کیوں کہ رقومات مستحقین کے کھاتوں میں ڈی بی ٹی موڈ کے ذریعے سے تفویض کئے جائیں گے ۔اُنہوں نے کہا کہ مزید بینک عملے کو ڈیوٹی پر آنے کی اجازت دی جانی چاہیے اور اس سلسلے میں اُنہیں مزید پاس جاری کئے جانے چاہئیں۔میٹنگ میں جانکاری دی گئی کہ ریلیف پیکیج کے تحت 20کروڑ خواتین جنددھن کھاتہ داروں کو اگلے تین ماہ تک بیمہ پانچ پانچ سو دئیے جائیں گے ، تین کروڑ غریب بزرگ شہریوں ، غریب بیوائوں اور جسمانی طور ناخیز افراد کو ایک ایک ہزار روپے کی ایکسگریشیا ریلیف دی جائے گی۔ اس کے علاوہ 8.7 کروڑ کسانوں کو پی ایم کسان یوجنا کے تحت اپریل مہینے کے پہلے ہفتے میں 2000روپے دئیے جائیں گے۔کابینہ سیکریٹری نے چیف سیکریٹریوں سے کہا کہ وہ ایس ایل بی سی میٹنگوں کاانعقاد کر کے پبلک اور پرائیویٹ سیکٹر بینکوں کے سربراہوں کے ساتھ ایکشن پلان تیار کریں۔اس کے علاوہ ڈپٹی کمشنروں سے کہا گیا ہے کہ وہ ضلع سطح پر بینکوں کے ساتھ میٹنگ منعقد کر کے انتظامات کو حتمی شکل دیں۔کابینہ سیکریٹری نے یوٹیز اور ریاستوں سے کہا کہ وہ پی ایم جی کے اے وائی کے تحت راشن کی تقسیم کاری کو بھی یقینی بنائیں جس کے تحت ملک میں 80کروڑ غریب عوام کو پانچ کلو گند م یا چاول کے ساتھ ساتھ ایک کلو دال اگلے تین ماہ تک فی ماہ مفت فراہم کیا جائے گا۔دریں اثنا ئمیٹنگ کے دوران کورونا وائرس مریضوں کا علاج کرنے کے لئے ریاستوں اور یوٹیز میں قائم کی گئی آئیسولیشن سہولیات سے جڑے امو ر پر بھی تبادلہ خیال کیا گیا۔۔ تمام ریاستوں اور یوٹیز سے کہا گیا ہے کہ وہ اس طرح کے سیل قائم کریں تاکہ غلط خبروں کے پھیلائوں  پر روک لگائی جاسکے اور عام لوگوں کو تنائو بچایا جاسکے۔ریاستوں اور یوٹیز کی طرف سے کورونا وائرس کو روکنے کے حوالے سے کوششوں پر تبادلہ خیال کرتے ہوئے اُنہوں نے کہا کہ رابطے میں آئے افراد کی نشاندہی کا عمل تیز کیا جانا چاہیے اور اس طرح کے لوگوں کو آئیسولیشن میں رکھا جاناچاہیے تاکہ یہ وائرس مزید نہ پھیلے۔اسی طرح کابینہ سیکرٹری نے سپلائی چین برقرار رکھنے ، اشیائے ضروریہ کی آزادانہ نقل و حمل یقینی بنانے اور مائیگرنٹ مزدوروں کی آواجاہی پر سختی سے روک لگانے کی بھی ہدایات دیں۔
 

تازہ ترین