تازہ ترین

جنوبی کشمیر میں پہلے مثبت کیس کا شاخسانہ | پلوامہ کے7دیہات ’ریڈ ‘،متعدد’ بفر زون‘ قرار

ریڈ زو ن میں آنے والے علاقوں میں ہر قسم کی نقل و حمل پر مکمل پابندی عائد

30 مارچ 2020 (12 : 12 AM)   
(      )

سید اعجاز
پلوامہ //جنوبی کشمیر میں پہلا مثبت کیس درج ہونے کے بعد ضلع مجسٹریٹ پلوامہ نے مہلک کورونا وائرس کے پھیلاوکو روکنے کے لئے ضلع کے سات دیہات کو’ ریڈ زون‘ جبکہ دو تحاصیل کے آس پاس آنے والے متعدد دیہات کو بفر زون میں شامل کیا ہے ۔اس دوران ضلع مجسٹریٹ نے ریڈزون کے علاقے میں آج سے ہی مکمل پابند عائد کی ہے اور یہاں کسی کو بھی گھروں سے باہر نکلنے کی اجازت نہیں ہوگی۔جنوبی کشمیر کے ضلع پلوامہ کے ایک دور افتادہ گائوں کھی گام میںاتوار کو ایک شخص کاٹیسٹ مثبت آنے کے بعد ضلع انتظامیہ پلوامہ نے ان تمام 7گائوں کو’ ریڈ زون‘ قرار دیا ہے جہاں مثبت ٹیسٹ نکلنے والا شخص حال ہی میں ایک دینی جماعت کے ساتھ  لوگوں سے ممکنہ طور پر ملاہے ۔ ریڈزون قرار دیئے گئے 7گائوں میں3گائوں تحصیل راجپورہ اور 4 تحصیل پلوامہ کی حدودمیں آتے ہیںجن میںکھی گام،سنگرونی،ابہامہ جو تحصیل راجپورہ کے تحت آتے ہیں،جبکہ تحصیل پلوامہ کے تحت آنے والے گائوں میںگڈورہ،چندگام،پنگلنہ اور پاری گام شامل ہیں۔ضلع انفارمیشن سینٹر پلوامہ کی جانب سے جاری بیان میں بتایاگیا ہے کہ ’ریڈ زون‘ قرار دیئے گئے علاقوں کے ملحقہ گائوں کو لوگوں کی حفاظت کے لئے بفر زون میں شامل کیا گیا ہے۔انہوں نے بتایا جس شخص کاٹیسٹ مثبت آیا ہے وہ حال ہی میں گڈورہ پلوامہ میںایک مذہبی جماعت کے ساتھ آنے کے بعد مذکورہ گائوں دیہات کے علاوہ اپنی نزدیکی گائوںمیں بھی گھوما ہے، جہاں ممکنہ طور پر وہ اور لوگوں سے بھی ملا ہے۔اس سلسلے میں ڈپٹی کمشنر پلوامہ نے مذکورہ دیہات کے لوگوںکی سلامتی یقینی بنانے کے لئے ایک حکم نامہ جاری کیا ہے ۔حکم نامے میں بتایا گیا ہے وائرس کومذید پھیلنے سے روکنے کے لئے اس طرح کے اقدامات ضروری ہیں۔حکمنامے کے مطابق اس سلسلے میں پلوامہ ،چکورہ ،نیوہ،پاری گام اورپلوامہ کلر،روڑ پر گاڑیوں کی آمدرفت مکمل طور معطل رہے گی جبکہ ریڈ زون والے علاقے میں مکمل لاک ڈائون ہوگا۔اس دوران ڈسٹرکٹ مجسٹریٹ نے ضروری خدمات فراہم کرنے والے محکموں کوتمام ضروری سہولیات بہم رکھنے کی ہدایت دی ہے ۔انہوںنے مذکورہ علاقوں میں رہنے والے مقامی اور غیر مقامی مزدورں کو ہدایات پر سختی سے عمل کرنے کی ہدایت دی ہے اور خلاف ورزی کرنے والوں کے خلاف سخت کاروائی عمل میں لانے کا اشارہ دیا ہے۔
 

تازہ ترین