سماجی دوریاں بنائے رکھیں: حریت(ع) کی عوام سے اپیل

یاسین ملک کی بگڑتی صحت پر تشویش کا اظہار، سبھی قیدیوں کی رہائی کا مطالبہ

25 مارچ 2020 (00 : 01 AM)   
(      )

 سرینگر//جماعتی حریت کانفرنس (ع)نے ممنوعہ جموںوکشمیر لبریشن فرنٹ کے محبوس سربراہ محمد یاسین ملک کی خرابی صحت پر تشویش کا اظہار کیا ہے۔حریت نے لوگوں کو کورو ناوائرس سے بچنے کیلئے گھروں کے اندر ہی رہنے کا مشورہ دیا ہے ۔ایک بیان میں حریت (ع) نے کہا کہ یاسین ملک کی والدہ اور ہمشیرہ نے اس بات کا انکشاف کیا ہے کہ تہاڑ جیل میں مقید یاسین ملک کی طبیعت شدید خراب ہو گئی ہے، چونکہ موصوف کو تیس سالہ پرانے معاملے میں منصفانہ سماعت کا موقعہ فراہم نہیں کیا گیا ہے، لہٰذا علیل محمد یاسین ملک نے یکم اپریل سے غیر معینہ مدت کیلئے بھوک ہڑتال پر جانے کا فیصلہ کیا ہے۔بیان میں کہا گیا کہ یاسین ملک کی فلاح و بہبود حکومت ہند کی ذمہ داری ہے جو اس بات کو یقینی بنائے کہ جیل میں موصوف کے ساتھ کوئی ناخوشگوار واقع پیش نہ آئے۔بیان میں کہا گیا کہ حریت قائدین، تاجر رہنمائوں ، سیول سوسائٹی کے افراد، طلباء اور نوجوانوں سمیت تمام کشمیری سیاسی قیدیوں جو تہاڑ ،آگرہ ، جے پورکے علاوہ جموںوکشمیر کی مختلف جیلوں میں قید و بند کی زندگی گزار رہے ہیں ، خطرناک عالمی وبا کوروناوائرس کی وجہ سے ان کے متعلقین اور رشتہ داروں میںگہری فکر و تشویش پائی جاتی ہے، لہٰذا تمام سیاسی نظر بندوں کی رہائی فی الفور یقینی بنائی جائے۔اس دوران حریت کانفرنس نے عوام کو اس بات کی سختی کے ساتھ تاکید کی ہے کہ سنگین عالمی وبا کورونا وائرس کے بڑھتے ہوئے خطرات اور منفی اثرات سے بچنے کیلئے طبی ماہرین کی آراء کی روشنی میں سماجی دوریاں بنائے رکھیں اور ہر طرح کے اجتماعات سے اجتناب کریں اور اپنے گھروں میں ہی قیام کو یقینی بنائیں۔
 

تازہ ترین