شاہراہ کی مرمت اور جنتا کرفیو کا نفاذ

گاڑیوں کی آمدورفت دوسرے روز بھی بند رہی

تاریخ    23 مارچ 2020 (06 : 12 AM)   


محمد تسکین
 بانہال // جموں سرینگرشاہراہ پر گاڑیوں کی آمدورفت اتوار کو دوسرے روز بھی بند رہی۔ حکام کا کہنا ہے کہ سڑک کی مرمت کے پیش نظر ایسا کیا گیا ہے۔ سنیچر کی شام ساڑھے سات بجے شاہراہ کو دس گھنٹوں تک بند رہنے کے بعد بحال کیا گیا تھا  اور وہاں درماندہ گاڑیوں کو نکالا گیا ۔ تاہم سنیچر کی رات گرتے پتھروں اور’ جنتا کرفیو‘ کے پیش نظر وادی کشمیر سے جموں کی طرف آنے والے ٹریفک کو سنیچر کی شام شاہراہ بحال ہونے کے باوجود بھی لور منڈا اور قاضی گنڈ سے آگے نہیں بڑھنے دیا گیا۔ اتوار کے روز جموں اور سرینگر سے کسی قسم کی ٹریفک کو شاہراہ پر چلنے کی اجازت نہیں تھی اور ہر وقت مشغول رہنے والی شاہراہ پر جواہر ٹنل سے ناشری ٹنل تک سناٹا تھا۔ 
 

تازہ ترین