شاہراہ گھنٹوں بند رہنے کے بعد بحال

ٹنل کے آر پار ٹریفک جام،آج درماندہ گاڑیوں کو اجازت

تاریخ    20 مارچ 2020 (00 : 01 AM)   


محمد تسکین
بانہال// جموں سرینگر قومی شاہراہ پر جمعرات کے دن تین روز بعد جموں سے وادی کشمیر کی طرف ٹریفک کو چلنے کی اجازت تھی جو ناشری ٹنل کے آرپار مختلف مقامات پر کئی گھنٹوں تک جاری رہنے ٹریفک جام کی صورت اختیار کر گیا۔شاہراہ رام بن کے نزدیک کیفٹیریا موڑ پر پسیوں کی وجہ سے جمعرات کی دوپہر سے شام تک متاثر رہی۔ جمعرات کے ٹریفک جام اور رام بن بانہال کے سیکٹر میں مختلف مقامات پر گرتے پتھروں اور پسیوں کی وجہ سے آج یعنی جمعہ کو شاہراہ جموں اور سرینگر سے کسی بھی قسم کے ٹریفک کو نہ چلانے کا اعلان کیا ہے اور درماندہ ٹریفک ہی وادی کشمیر کی طرف چلے گا۔ ڈی ایس پی ٹریفک نیشنل ہائی وے رام بن اجے آنند نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ جمعرات کو کیفٹیریا موڑ رام بن کے دو مقام شاہراہ پر دو پسیاں گر آئیں جس کی وجہ سے دوپہر ایک بجے سے شام پانچ بجے تک ٹریفک کی امدورفت متاثر رہی۔ انہوں نے کہا کہ اس سے پہلے سینکڑوں گاڑیوں نے وادی کشمیر کا رخ کیا تھا۔ انہوں نے کہا کہ بھاری مال بردار ٹرک ادہمپور سے ریلیز کئے جارہے  ہیں اور سب کچھ ٹھیک رہنے کہ صورت میں انہیں ان رات وادی کی طرف نکال لیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ شاہراہ کے بند ہونے کی وجہ سے ادہمپور اور رام بن کے درمیان کئی مقامات پر ٹریفک جام رہا جسے اب صاف کیا جارہا ہے اور بھاری مال بردار ٹریفک وادی کشمیر کی طرف بڑھ رہا ہے۔ 
 

تازہ ترین