ریاست میں اسمبلی انتخابات سے قبل مکمل حد بندی کی جائے:کانگریس

تاریخ    9 جون 2019 (00 : 01 AM)   


جموں //ضلع کانگریس کمیٹی جموں دیہی نے بی جے پی سرکار سے ریاست میں اسمبلی انتخابات منعقد کرنے سے قبل مکمل حد بندی کرنے کے لئے ضروری اقدام کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔ پارٹی کی جانب سے یہاں ہفتہ کے روز بوٹا نگر میں منعقدہ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے ضلع کانگریس کمیٹی دیہی کے صدر ہری سنگھ چب نے بی جے پی پر ریاست کے ووٹروں کو اسمبلی اور لوک سبھا حلقوں کی تقسیم کاری میں مبینہ امتیاز برتنے کا الزام لگایا ۔چب نے کہا کہ کشمیر کے مقابلہ میں جموں میں زیادہ ووٹراں ہیں،لیکن اسے فقط 37نشستیں دی گئی ہیں جب کہ وادی کشمیر کو 46 نشستیں دی گئی ہیں۔انہوں نے بی جے پی پر اپنے وعدہ پورے کرنے میں ناکام رہنے کا الزام لگایا ہے۔انہوں نے کہا کہ بی جے پی نے 2014کے انتخابات کے دوران جموں خطہ کے ساتھ سیاسی تعصب کا خاتمہ کرنے کیلئے ’’ویژن ڈاکیومنٹ ‘‘ جاری کیا تھا ۔ انہوں نے کہا کہ پارٹی نے حدبندی کمیشن لاگو کرنے کی یقین دہانی کی تھی۔انہوں نے مبینہ الزام لگایا کہ بی جے پی 2014 میں جاری کئے گئے انتخابی منشور کو لاگو کارنے میں ناکام رہی ہے۔انہوں نے حد بندی کمیشن کو لا گو کرنے کے ساتھ ساتھ جموں خطہ کے ساتھ انصاف کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے خواتین کیلئے33فیصدی ریزرویشن ،پی او جے کے کے بے گھر لوگوں کیلئے پانچ نشستیں اور کشمیری مائیگرنٹوں کیلئے تین نشستیں مخصوص رکھنے کا مطالبہ کیا۔انہوں نے بی جے پی سے کاہ کہ اب جبکہ انہیں بھاری اکثریت حاصل ہوئی ہے ،تو انہیں ایودھیا میں رام مندر تعمیر کرنے میں کوئی پریشانی نہیں ہے۔انہوں نے دفعہ 370 اور35A کو ہٹانے کیلئے مناسب اقدام کرنے کا بھی مطالبہ کیا۔اجلاس میں دیو راج، سریندر کمار، روشن لعل، ڈاکٹ رہری داس، رام لعل ،اوتم چند، رویندر کول، روپ کرشن ،سنجے بھٹ،روی کمار، ترن وید، سوہن لعل، جگت رام ،یش پال اور رام پال وغیرہ بھی موجود تھے۔
 

تازہ ترین