تازہ ترین

مسلسل 25ویں ہفتے جامع مسجد نمازجمعہ کیلئے بندرہی

انجمن اوقاف جامع نے مداخلت فی الدین قراردیا

تاریخ    22 جنوری 2022 (00 : 01 AM)   


 سرینگر//انجمن اوقاف جامع مسجد سرینگر نے مسلسل25ویں جمعہ جامع مسجدسرینگر میں نمازجمعہ اداکرنے کی اجازت نہ دینے پر برہمی کااظہار کرتے ہوئے کہا کہ کشمیری مسلمانوں کے مذہبی جذبات کوٹھیس پہنچانے کاعمل جاری ہے جو ہرلحاظ سے قابل مذمت ہے۔ایک بیان میں انجمن نے اِسے مداخلت فی الدین قراردیتے ہوئے یہ بات دہرائی کہ ایک خاص منصوبے کے تحت تاریخی جامع مسجد کو بندرکھنے کاعمل جاری ہے۔یان میں واضح کیا گیا کہ اگرچہ انجمن اوقاف نے مہلک وبا کورونا وائرس کی بڑھتی ہوئی متعدی بیماری کے پیش نظر  تمام تر ایس او پیز اور احتیاطی تدابیر کا اہتمام کررکھا ہے اس کے باوجود نماز جمعہ کی اجازت نہ ملنا حد درجہ افسوسناک اور باعث اضطراب ہے۔انجمن نے اس امرکو بھی حد درجہ تکلیف دہ اور اذیت ناک قرار دیا کہ سربراہ انجمن میرواعظ  مولوی محمد عمر فاروق جو عوام کے بلند پایہ مقتدر رہنما ہیں ،انہیں بھی 5اگست2019 سے لگاتار نظر بند رکھا گیا ہے اور اس طرح موصوف کی منصبی ذمہ داریوں کے ساتھ ساتھ پر امن سرگرمیوں پر بھی قدغن عائد ہے ۔بیان میں کہا گیا کہ حکام کو چاہئے کہ وہ حقائق کا اعتراف کرتے ہوئے نہ صرف جامع مسجد کو نماز جمعہ کیلئے کھول دے بلکہ میرواعظ کی رہائی یقینی بنائے۔