پریس کالونی میں طلاب کا احتجاج | حکومت پر مستقبل سے کھلواڑ کرنے کا الزام

تاریخ    12 جنوری 2022 (00 : 01 AM)   


نیوز ڈیسک
سرینگر// حکومت کی جانب سے کوچنگ مراکز کو بند کرنے کے فیصلے کے خلاف درجنوں طلاب نے منگل کو سرینگر میںاحتجاج کرتے ہوئے کہا کہ انتظامیہ انکے مستقبل کے ساتھ کھیل رہی ہے۔سرینگر کی پریس کالونی میں منگل کو درجنوں طلاب نمودار ہوئے اور سرکار کی جانب سے کوچنگ مراکز کو بند کرنے کے فیصلے کے خلاف نعرہ بازی کی۔مظاہرین جن میں زیادہ تر تعداد طالبات کی تھی،نے کہا کہ گزشتہ2برسوں سے تعلیمی شعبے کو ہی سب سے زیاد نقصان پہنچا۔ان کا کہنا تھا کہ وہ مسابقتی امتحانات کی تیاریوں میں مشغول ہیں،اور آن لائن طریقہ کار سے انہیں نقصان ہوگا۔ احتجاجی طلاب نے سوالیہ انداز میں کہا کہ جب سیاحوں کے آنے سے کویڈ میں اضافہ نہیں ہوگا،مسافربردار گاڑیوں میں بھیڑ سے کویڈ نہیں پھلے کا تو ،کوچنگ مراکز کے کھلے رکھنے سے کیونکر اس وبائی بیماری میں اضافہ ہوگا۔احتجاجیوں نے کہا کہ وہ چھوٹے بچے نہیں ہیں بلکہ کویڈ عملیاتی طریقہ کار،رہنما خطوط اور کویڈ مناسب رویہ کی پاسداری کرکے اپنی تعلیم کو جاری رکھ سکتے ہیں،اور مسابقتی امتحانات کیلئے بھی تیار ہو سکتے ہیں۔انہوں نے انتظامیہ سے اپیل کی کہ وہ اپنے فیصلے پر پھر سے نظر ثانی کریں اور طلاب کا مستقبل تاریک ہونے سے بچائیں۔
 

تازہ ترین