۔7ماہ میںقریب 20ہزارکینسر مریضوں کا مفت علاج آیوشمان بھارت صحت سکیم سرطان کے مریضوں کیلئے سنجیونی بوٹی ثابت

پرویز احمد

سرینگر //پردھان منتری جن آروگیہ یوجنا کی صحت سکیم، جہاں جموں و کشمیر کے تمام کنبوں کو مفت طبی سہولیات فراہم کرانے سے راحت پہنچانے میں کامیاب رہی ہے، وہیں کینسر مریضوں کیلئے بھی یہ سکیم علاج کا بوجھ کم کرنے میں کامیاب رہی ہے۔ صحت اسکیم کے تحت یکم جنوری سے جولائی 2023 تک 19ہزار601مریضوں کو مفت علاج و معالجہ کی سہولیات فراہم کی گئیں، جن میں 957 جراحیاںبھی شامل ہیں۔ 26دسمبر 2020کو ملک کی دیگر ریاستوں کے ساتھ ساتھ مرکزی زیر انتظام جموں و کشمیر میں بھی لوگوں کو مفت طبی سہولیات فراہم کرنے کیلئے صحت اسکیم کا آغاز کیا گیا۔22اگست 2019کو نیشنل ہیلتھ اتھارٹی نے کینسر سے متعلق تمام تشخیصی ٹیسٹوں ، تھرپیوں اور دیگر ذریعہ علاج کو اس سکیم میں شامل کیا اور پھر5اکتوبر 2021کو نیشنل ہیلتھ اتھارٹی نے پورے ملک میں علاج و معالجہ کیلئے تیار ہونے والے ’سکیم پیکیجوں‘ میں 20فیصد کا اضافہ بھی کیا، جن میں کینسر مریض بھی شامل ہیں۔ ریجنل کینسر انسٹی ٹیوٹ سکمز صورہ میں علاج و معالجے کیلئے آنے والے ایک مریض جاوید احمد نے بتایا ’’ آیوشمان بھارت کے تحت ہسپتال میں داخلے کے دوران سرطان کے مریضوں کو معمول کے علاج و معالجہ کے علاوہ تشخیصی ٹیسٹ اور کیموتھرپیز بھی دی جاتی ہیںکیونکہ مریضوں کو گھر میں علاج کے دوران مشکلات کا سامنا ہوتا ہے کیونکہ گھر میں ادویات اور دیگر چیزیوں پر کافی پیسہ صرف کرنا پڑتا ہے۔سکمزمیں آیوشمان بھارت کے نوڈل آفیسر ڈاکٹر ہارون نے کشمیر عظمی کو بتایا کہ کینسر انسٹی ٹیوٹ میں امسال یکم جنوری سے جولائی کے آخرتک 5017 مریضوں کو علاج و معالجہ فراہم کیا گیا جن میں جنوری میں 730،فروری میں701، مارچ میں795، اپریل 684، مئی 747، جون 627 اور جولائی کے 733مریض شامل ہیں۔انہوں نے کہا کہ سرطان کے ان مریضوں کو ہر طرح کی سہولیات فراہم کی جارہی ہیں، جن میں تشخیصی ٹیسٹ اورمختلف اقسام کی تھرپیاںشامل ہیں۔ اس دوران آیوشمان بھارت کی جانب سے فراہم کی گئی تفصیلات میں کہا گیا ہے کہ19ہزار 601مریضوں کو مفت علاج و معالجہ فراہم کیا گیا جن میں شعبہ میڈیکل انکولاجی میں 17ہزار 478، شعبہ ریڈنٹ انکولاجی میں 1166 جبکہ شعبہ سرجیکل انکولاجی میں اس دوران 957مریضوں کی جراحیاں انجام دی گئیں۔ آیوشمان بھارت کی ترجمان نورین راجا نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا ’’ کینسر مریضوں کیلئے مفت علاج اور تشخیص کے علاوہ تھرپیوں کے اخرجات بھی آیوشمان بھارت سکیم کے دائرے میں آتے ہیں۔ــانہوں نے کہا کہ سکیم کے مطابق تمام مریضوں کو مفت علاج اسپتال میں داخلے کے دوران ہی ملتا ہے۔