۔2نئے ہائی کورٹ ججوں کو عہدے کا حلف دِلایا گیا

جموں//جموںوکشمیر اور لداخ ہائی کورٹ کے چیف جسٹس، جسٹس پنکج متھل نے منگل کو دو نئے تعینات ہونے والے ججوں جسٹس موہن لال او رجسٹس محمد اکرم چودھری کو جموںوکشمیر اور لداخ کی ہائی کورٹ کے ججوں کے عہدے کا حلف دِلایا۔جموں میں حلف برداری کی قریب میں جسٹس دھیرج سنگھ ٹھاکر ، جسٹس سندھو شرما ، جسٹس رجنیش اوسوال ، جٹس وِنود چٹر جی کول او رجسٹس پونیت گپتا نے شرکت کی جبکہ جسٹس علی محمد ماگرے ، جسٹس سنجیو کمار، جسٹس سنجے دھر اور جسٹس جاوید اِقبال وانی نے بذریعہ آن لائن سری نگر سے حصہ لیا۔تقریب کی کاررِوائی جموںوکشمیر اور لداخ کے ہائی کورٹ کے رجسٹرار جنرل جواد احمد نے انجام دی جنہوں نے مرکزی وزارتِ قانون و اِنصاف کی طرف سے جاری نوٹیفکیشن کو پڑھا جس میں صدر جمہوریہ کی طرف سے وارنٹس آف اپائمنٹ اور لیفٹیننٹ گورنریونین ٹیریٹری آف جموں و کشمیر کی طرف سے جاری کردہ اختیار ی خط جس میں چیف جسٹس جموںوکشمیر ہائی کورٹ کو دو نئے تعینات ہونے والے ججوں کو عہدے کا حلف دِلانے کا اختیار دیا گیا ہے۔تقریب میں سابق چیف جسٹس ، ہائی کورٹ کے سابق ججوں ، ایڈووکیٹ جنرل ، چیف سیکرٹری ، اسسٹنٹ سالیسٹر جنرل آف اِنڈیاجموں، سیکرٹری محکمہ قانون ، اِنصاف اور پارلیمانی اَمور ،جموں ہیڈ کوارٹر میں تعینات ڈسٹرکٹ ججوں ، مختلف باروں کے ممبران ، رجسٹری اَفسران اور عملہ کے علاوہ سول اور پولیس اِنتظامیہ کے اَفسران نے شرکت کی۔جوڈیشل سروسز سے دو سینئر ججوں کو مستقل ججوں کے طور پر ترقی دینے کے ساتھ ہی جموں و کشمیر اور لداخ ہائی کورٹ کے ججوں کی تعداد چیف جسٹس سمیت 13 ججوں تک پہنچ گئی ہے۔