۔ 2107پاکستانیوں کی رہائی کا حکم

 اسلام آباد//پاکستان کے سفر پرآئے سعودی عرب کے شہزادے محمد بن سلمان نے پیر کو ان کے ملک میں بند 2107پاکستانی قیدیوں کو فوراً رہا کرنے کا حکم دیا ہے ۔پلوامہ حملے پر خاموشی اختیار کرنے والے پاکستان کے وزیراعظم عمران خان اور پاکستان کی فوج کے سربراہ قمر جاوید باجوا نے اسلام آباد کے نزدیک راول پنڈی فوجی ایئرپورٹ پر سعودی عرب کے شہزادے کا کل زبردست استقبال کیاتھا۔مسٹر خان انہیں اپنی رہائش گاہ پر لے گئے تھے ۔جیو نیوز کی رپورٹ کے مطابق دونوں نے کہا کہ پاکستان کے دودن کے سفر پر آئے سعودی عرب کے شہزادے نے وزیراعظم عمران خان کی اپیل پر قیدیوں کو رہا کرنے کا حکم دیا۔مسٹر قریشی نے ٹویٹ کرکے بتایا ،“شہزادہ محمد بن سلمان فوری طور پر سعودی عرب میں بند 2107پاکستانی قیدیوں کو رہا کرنے کے لئے راضی ہوگئے۔ ”انہوں نے لکھا“باقی قیدیوں کے معاملے جائزہ لیا جائے گا۔وزیراعظم کی اپیل پر فوری کارروائی کے لئے پاکستان کے عوام شہزادے کا شکریہ اداکرتے ہیں۔محمد بن سلمان کے اس سفر میں ان کے ساتھ سعودی عرب کے وزرا،سینئر افسران اور سرکردہ صنعت کاروں کا اعلی سطحی وفد بھی شامل ہے ۔مالی طور پر ابترحالات سے دوچار پاکستان کو سعودی عرب کی جانب سے کچھ سرمایہ کاری کے اعلان کی امید ہے ۔سعودی عرب نے حالیہ کچھ مہینوں میں چھ ارب کا قرض دے کر پاکستان کی مدد کی تھی۔پاکستان بین الاقوامی مالیاتی فنڈ سے بھی راحت پیکج کے لئے بات چیت کررہا ہے ۔سعودی عرب نے جموں و کشمیر کے پلوامہ میں ہندوستانی سلامتی دستوں کو ہدف بنا کر کئے گئے فدائین حملے کی سخت مذمت کی ہے ۔منگل کو محمد بن سلمان کے ساتھ سعودی وفد کے ہندوستان پہنچنے کی امید ہے ۔سعودی شہزادے کا سرکاری طورپر ہندوستان کا یہ پہلا دورہ ہوگا۔یواین آئی