یچھ گوز اور بامنو علیحدہ ریونیو دیہات قرار

 سرینگر//حکومت نے مقامی لوگوں کی ایک دیرینہ مانگ کو پورا کرتے ہوئے ضلع پلوامہ کے راجپورہ حلقہ کے اچھہ گوزہ ۔ بامنو گاﺅں کو یچھ گوز اور بمنو کے الگ الگ ریونیو ولیجز کے طور کرنے کے احکامات صادر کئے ہےں۔اس حوالے سے مال محکمہ کے کمشنر سیکرٹری کی طرف سے جموں وکشمیر لینڈ ریونیو ایکٹ سموت ۔ 1996کے سیکشن ۔3(1) کے تحت ایک حکمنامہ جاری کیا گیا ہے جس کی رو سے اچھہ گوزہ اور بمنو کو الگ الگ ریونیو دیہات قرار دیا گیا ہے ۔اس حکمنامہ کے تحت اچھہ گوزہ کا نیا ریونیو ولیج 4154 کنال اراضی پر محیط ہوگا جبکہ بمنو گاﺅں 2782کنال پر مشتمل ہوگا ۔حکمنامے میں کہا گیا ہے کہ نئے دیہات کےلئے الگ سے حقوق کا ریکارڈ تیار کیا جائے گا۔البتہ نئے گاﺅں کے لوگوں کو کاہچرائی اراضی اور باقی مشترکہ اراضی بشمول راستوں ، سڑکوں ، آبپاشی کنالوں ، چشموں اور پینے کے پانی جیسے وسائل پر مشترکہ حقوق حاصل ہوں گے ۔ان دو گاﺅں کی بائیفر کیشن وزیر خزانہ ڈاکٹر حسیب اے درابو کی کوششوں کے بعد عمل میںلائی گئی ہے جو ریاستی قانون سازیہ میں راج پورہ حلقے کی نمائندگی کرتے ہیں۔ اس علاقے کے لوگوں نے اس اہم اور تاریخی فیصلے کے لئے وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی اور وزیر خزانہ ڈاکٹرحسیب اے درابو کا شکر یہ ادا کیا ہے۔انہوں نے کہا ہے کہ یہ فیصلہ اس گاﺅں اور یہاں رہنے والے لوگوں کی سماجی و اقتصادی ترقی کو بلندیوں تک لے جانے میں مددگار ثابت ہوگا۔واضح رہے کہ حکومت نے اس سال کے اوائل میں ڈاکٹر درابو کی کاوشوں کے بعد اسی علاقے میں لسی دبن گاﺅں کو بھی ایک علاحدہ ریونیو ولیج قرار دیا تھا۔