یوکرین میں ہندوستانیوں کو یرغمال بنائے جانے کی کوئی اطلاع نہیں‘:وزارتِ خارجہ

نئی دہلی//وزارت خارجہ نے جمعرات کو کہا کہ اسے یوکرین میں ہندوستانی طلباء کے یرغمال بنائے جانے کی کوئی اطلاع نہیں ملی ہے۔
 
میڈیا کے سوالات کا جواب دیتے ہوئے، وزارت خارجہ کے ترجمان ارندم باگچی نے کہا’’یوکرین میں ہمارا سفارت خانہ وہاں رہنے والے ہندوستانیوں کے ساتھ مسلسل رابطے میں ہے۔ یوکرین کی حکومت کے تعاون سے زیادہ تر طلباء کل خارکیف چھوڑ چکے ہیں۔ ہمیں کسی کو یرغمال بنائے جانے کی کوئی اطلاع نہیں ملی ہے۔ ہم نے یوکرین کی حکومت سے درخواست کی ہے کہ وہ ہمارے طلبا کو خارکیف اور آس پاس کے علاقوں سے نکال کر مغربی حصے تک پہنچانے کے لیے خصوصی ٹرینیں چلائیں۔
 
ترجمان نے کہا کہ ہم خطے کے مختلف ممالک بشمول روس، رومانیہ، پولینڈ، ہنگری، سلواکیہ اور مالڈووا کے ساتھ ہم آہنگی اور تعاون سے کام کر رہے ہیں۔ گزشتہ چند دنوں میں بڑی تعداد میں ہندوستانی لوگوں کو نکالا گیا ہے۔
 
مسٹر باگچی نے کہا کہ ہم یوکرین کی حکومت کی طرف سے فراہم کردہ مدد کی تعریف کرتے ہیں۔ ہم یوکرین کے مغربی پڑوسیوں کا شکریہ ادا کرتے ہیں کہ انہوں نے یوکرین سے نکالے گئے ہندوستانی طلباء کو اس وقت تک پناہ دی جب تک کہ وہ گھر واپس جانے کے لیے ہوائی جہاز میں سوار نہ ہو گئے۔