یونان کے جنگلات میں 6 دنوں سے لگی آگ تاحال بے قابو

ایتھنز// یونان کے ساحلی علاقوں سے متصل جنگلات میں لگی آگ تاحال بے قابو ہے جس کی زد میں آ کر ہلاک ہونے والوں کی تعداد 91 ہوگئی ہے۔بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق یونان کے دارالحکومت سے متصل جنگلات میں خوفناک ا?تشزدگی پر 6 دن بعد بھی قابو نہیں پایا جا سکا ہے۔ تیزی سے پھیلنے والی ا?گ سے مزید 3 افراد ہلاک ہو گئے ہیں اس طرح 24 جولائی کو لگنے والی ا?گ سے ہلاک ہونے والوں کی تعداد 91 ہو گئی ہے جب کہ سیکڑوں افراد زخمی اور 25 تاحال لاپتہ  ہیں۔ہلاک ہونے والوں میں 28 کی لاشیں ناقابل شناخت ہیں جن کے ڈی این اے کے نمونے فرانزک لیب بھیجوائے گئے ہیں۔ ایتھنز کے ساحلی علاقوں میں لگنے والی اس آگ کو ملکی تاریخ کی بد ترین ا?تشزدگی قرار دیا جا رہا ہے جس نے رہائشی علاقوں کو اپنی لپیٹ میں لے لیا ہے۔ اب تک سیکڑوں عمارتیں اور گھر راکھ کا ڈھیر بن چکے ہیں، ریسکیو کا عملہ امدادی کارروائیوں میں مصروف ہے اور تاحال لوگوں کی نقل مکانی کا سلسلہ جاری ہے۔یونان حکومت کے ترجمان نے میڈیا سے گفتگو میں بتایا ہے کہ 6 دن سے لگی ا?گ کی وجوہات کا تعین نہیں ہوسکا ہے ابھی ساری توجہ متاثرہ علاقوں میں پھنسے افراد کی محفوظ مقام پر منتقلی اور امدادی کام ہیں تاہم اس بات کے امکان موجود ہیں کہ یہ آگ جان بوجھ کر لگائی گئی ہو۔