یوسمرگ حکومت کی نظروں میں اوجھل: نذیر یتو

سرینگر//پیپلزڈیموکریٹک پارٹی رہنماانجینئرنذیراحمدیتونے الزام عائد کیا ہے کہ گورنر انتظامیہ مشہورسیاحتی مقام یوسمرگ کو نظرانداز کر رہی ہے۔ انہوں نے گورنر سے اپیل کی کہ وہ اس معاملے کو محکمہ سیاحت کے ساتھ اُٹھائیں کیوں کہ مقامی مرکبان اورسیاحت سے جڑے لوگ مشکلات سے دوچار ہیں ۔انجینئریتونے کہا کہ وادی کشمیر میں اَن چھیڑاسیاحتی مقام ہونے کے باوجودیوسمرگ حکام کی غفلت کی وجہ سے نظرانداز کیاجارہا ہے۔ سرینگرشہر سے زیادہ دور نہ ہونے کے باوجود محکمہ سیاحت اِس سیاحتی مقام کو پرکشش مقام کے طور پیش کرنے میں ناکام ہے۔انہوں نے کہا کہ’ میں نے علاقہ کادورہ کرکے دیکھا کہ وہاں کے مرکبان اور سیاحتی شعبے سے وابستہ دیگر مقامی لوگ مشکلات کاسامنا کررہے ہیں ۔جموں کشمیر ٹورازم ڈیولپمنٹ کارپوریشن کی ہٹیں خالی ہیں اوریہ سنگین معاملہ ہے،میں گورنر ستیہ پال ملک اور اُن کے مشیرخورشیداحمد گنائی سے اپیل کرتا ہوں کہ وہ اس معاملے میں مداخلت کریں‘۔ انہوں نے مزیدکہا کہ یوسمرگ میں موبائل فون رابطے کاکوئی انتظام نہیں ہے اور علاقہ میں اے ٹی ایم بھی مہیا نہیں ہے ۔اس وقت جبکہ ریاست کے دورافتادہ علاقوں میں بھی موبائل رابطہ دستیاب ہے ،یوسمرگ اس سے محروم ہے جس وجہ سے یہاں سیر پرآنے والوں کو مشکلات پیش آتی ہیں ۔انہوں نے کہا کہ اے ٹی ایم نہ ہونے کی وجہ سے یہاں کے لوگوں کو آٹھ کلومیٹر دور پکھرپورہ نقد رقم حاصل کرنے کیلئے جانا پڑتا ہے ۔