ہندوارہ میں پولیس کی گشتی پارٹی پرحملہ، فائرنگ میں2جنگجوجا ں بحق

کپوارہ// ہندوارہ کے زچلڈارہ علاقے میں پولیس پارٹی پر گھات لگا کر کئے گئے حملہ کے بعد ایک خونریز تصادم آرائی میں حزب سے وابستہ سوپور اور پلہالن کے دو جنگجو جاں بحق ہوگئے۔پولیس نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ شام دیر گئے گلگنزر سلطان پورہ پل کے نزدیک جنگجو گھات لگا کر بیٹھے تھے جس کے دوران وہاں سے زچلڈارہ پولیس چوکی کی ایک گشتی پارٹی گزر رہی تھی۔ اس دوران جنگجوئو ں نے پولیس کی گشتی پارٹی پر گھات لگا کر حملہ کیا تاہم پولیس نے بھی جو ابی کارروائی میں گولیا ں چلائیں ۔حملہ کے بعد فوج کی 21راشٹریہ رائفلز اور سپیشل آ پریشن گروپ ہندوارہ نے علاقہ کو محاصر ہ میں لیکر جنگجوئو ں کی تلاش شروع کی ۔ علاقہ میں چھپے بیٹھے جنگجوئو ں نے فوج پر بھی گولیا ں چلائیں جس کے بعد طرفین کے درمیان خون ریز جھڑپ کا سلسلہ شروع ہوا ۔پولیس کا کہنا ہے کہ تصادم آرائی میں 2جنگجو جا ں بحق ہوئے ۔مارے گئے جنگجوئوں کی شناخت طیب ساکن براٹھ کلاں سوپور اور عاشق حسین ساکن پلہالن پٹن کے بطور کی جارہی ہے۔ دونوں حزب المجالدین سے وابستہ تھے۔معلوم ہوا ہے کہ فورسز کے کچھ اہلکار بھی زخمی ہوئے ہیں تاہم اسکی تصدیق نہیں ہوسکی۔پولیس نے بتایا کہ علاقے کی ناکہ بندی کردی گئی ہے اور مزید جنگجوئوں کی موجودگی کے خدشہ کے پیش نظر تلاشی کارروائی کا آغاز کردیا گیا ہے۔جھڑپ کے فوراً بعد شمالی کشمیرمیں انٹرنیٹ سروس بند کردی گئی۔ اس دوران حکام نے سرینگر بارہمولہ ریل سروس آج دن کیلئے معطل کرنے کا فیصلہ کیا ہے البتہ سرینگر سے بانہال تک ٹرین سروس جاری رہے گی۔