ہر جرم کی کچھ سزا ہونا لازمی ۔2024کے اختتام تک انٹیلی جنٹ ٹریفک مینجمنٹ سسٹمز تمام شہروں میں مکمل طور پر کام کرینگے

  سڑکوں پر چوکسی بڑھائیں، ٹریفک اموات کم کرنے کیلئے جامع حکمت عملی تیار کریں:چیف سیکریٹری

جموں// چیف سیکرٹری اتل ڈلو نے یو ٹی میں ٹریفک کے منظر نامے اور اس کے موثر انتظام پر متعلقہ حکام کے ساتھ تبادلہ خیال کرتے ہوئے کہا کہ یہ ہر ٹریفک پولیس اہلکار کا فرض ہونا چاہئیے کہ وہ یو ٹی میں ٹریفک کے بہتر انتظام کیلئے کام کرے ۔ چیف سیکرٹری نے مزید کہا کہ شہر کی سڑکوں اور مشہور سیاحتی مقامات پر جانے والوں پر زیادہ توجہ دینے کی ضرورت ہے کیونکہ زیادہ تر ٹریفک کی نقل و حرکت انہی سڑکوں پر ہوتی ہے ۔ انہوں نے ٹریفک ڈیٹا کا تجزیہ کرنے اور کافی تعداد میں افرادی قوت کو ان علاقوں کی طرف موڑنے پر زور دیا جو زیادہ گنجان اور ٹریفک حادثوں کا شکار ہیں ۔ دونوں شہروں سرینگر اور جموں میں ٹریفک کے انتظام کے بارے میں چیف سیکرٹری نے غلط اور سڑک کے کنارے پارکنگ کے خلاف سختی سے عمل درآمد کرنے پر زور دیا ۔ انہوں نے بار بار مجرموں کی نشاندہی کرنے کے علاوہ اس لعنت کو کم کرنے کیلئے آئی ٹی ٹولز کے موثر استعمال کیلئے کہا۔انہوں نے سڑکوں پر ہونے والی اموات کو کم کرنے اور ہر گذرتے سال کے ساتھ ان میںکمی لانے کیلئے ایک جامع حکمت عملی وضع کرنے کا مشورہ دیا ۔ انہوں نے ٹرانسپورٹ ، پولیس اور ٹریفک کے محکموں سمیت تمام متعلقہ اداروں سے معلومات لینے پر زور دیا تا کہ اس بات کو یقینی بنایا جا سکے کہ یہاں کے شہری مذہبی طور پر ٹریفک کے ضوابط کی پابندی کرتے ہیں ۔ ڈولو نے کہا کہ ہر جرم پر کچھ سزائیں ہونی چاہئیں جو آخر کار بار بار مجرموں کے ڈرائیونگ لائیسنس کی منسوخی کا باعث بنیں ۔ انہوں نے ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی کرنے والے ڈرائیوروں کے خود کار چالان کرنے کیلئے نئے طریقہ کار کو بروئے کار لانے کیلئے ٹائم لائینز طے کرنے کے ساتھ ساتھ ہماری سڑکوں پر ڈرائیونگ لائیسنس کے اجراء سے لے کر شناخت اور ٹریفک کی خلاف ورزی کرنے والے بکنگ کیلئے آئی ٹی ٹولز کے استعمال تک کثیر جہتی حکمت عملی کا سہارا لے کر سڑکوں پر نظم و ضبط کے ساتھ ڈرائیونگ کیلئے منصوبہ بندی کرنے کیلئے ٹائم لائینز طے کرنے کو کہا ۔ بات چیت کے دوران چیف سیکرٹری کو مطلع کیا گیا کہ اس سال یو ٹی نے نومبر تک خلاف ورزی کرنے والوں سے 17 کروڑ روپے کی رقم وصول کی ہے ۔ مزید بتایا گیا کہ آنے والی مالی سال کے اختتام تک انٹیلی جنٹ ٹریفک منیجمنٹ سسٹمز (آئی ٹی ایم ایس ) کے علاوہ ایک مضبوط سٹی سرویلنس سسٹم جموں و کشمیر کے تمام شہروں میں مکمل طور پر کام کرے گا جس کا سڑکوں پر ٹریفک کی آسانی سے چلانے پر اہم اثر پڑے گا ۔ مزید بتایا گیا کہ ڈرائیونگ لائسنس کے حصول کیلئے ٹیسٹنگ اور ٹریلرز کو زیادہ بامعنی اور شفاف بنانے کے ساتھ ساتھ محکمہ ٹریفک پولیس کے ساتھ مل کر مسافروں کو راحت پہنچانے کے ساتھ ساتھ حادثات کے واقعات کو کم کرنے کیلئے مزید نتیجہ خیز منصوبہ بندی کرنے جا رہا ہے ۔