ہامرے پٹن میں جل شکتی محکمہ کے خلاف دھرنا،عشم میں احتجاج

 بارہمولہ // ضلع بارہمولہ کے ہامرے پٹن میں لوگوں نے پینے کے صاف پانی کی عدم دستیابی کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا ۔ پرہ محلہ ہامرے کے لوگوں نے منگل کو سرینگر بارہمولہ شاہراہ پر آکر جل شکتی محکمہ پر الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ مقامی آبادی کو ناصاف پانی استعمال کرنے پر مجبور کیا جارہا ہے۔ احتجاجی لوگ جل شکتی محکمہ کے خلاف نعرے بازی کررہے تھے جس دوران شاہراہ پر ٹریفک میں خلل پڑا۔ مظاہرین کا کہنا تھا کہ متعلقہ محکمہ کے ملازمین انہیں آلودہ پانی استعمال کرنے پر مجبور کررہے ہیں اور محکمہ اس کا حل تلاش کرنے میں ناکام ہے ، جس کی وجہ سے علاقے میں پانی سے پیدا ہونے والی بیماریوں کے پھیلنے کے امکانات ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ اگر چہ انہو ں نے کئی مرتبہ متعلقہ محکمہ کو آگاہ کیا تاہم کوئی کارروائی نہیں ہوئی۔ اس دوران متعلقہ پولیس تھانہ کی ایک ٹیم موقع پر پہنچ گئی اور انہوں نے مظاہرین کو یقین دہانی کرائی کہ وہ فوری طور پر اس معاملے کو اعلیٰ حکام تک پہنچائیں گے جس کے بعد مظاہرین پُر امن طور منتشر ہوئے ۔ادھرعشم سمبل میں جل شکتی محکمہ کے خلاف لوگوں نے احتجاج کرتے ہوئے کہا کہ انہیں پینے کے پانی کی سخت قلت ہے۔احتجاج میں شامل خواتین نے سمبل سوپور روڈ پر دھرنا دیا۔انہوں نے کہا کہ علاقے میں گزشتہ کئی ہفتوں سے پینے کے پانی کی سخت قلت ہے اور جل شکتی محکمہ کو اس صورتحال سے آگاہ کیا گیالیکن کوئی کارروائی نہیں کی گئی۔مظاہرین نے بتایا کہ انہیں گوناگوں مسائل کا سامنا ہے۔انہوںنے جل شکتی کے اعلیٰ حکام سے مداخلت کی اپیل کی ۔ (مشمولات سی این ایس)