گیلانی کے نام نوٹس پاکستان کی مذمت

 اسلام آباد // پاکستان نے سید علی گیلانی کے نام انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ کی طرف سے نوٹس بھیجنے کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ اسکا مقصد کشمیرکی جد و جہد کو کمزور کرنا ہے۔وزارت خارجہ کے ایک ترجمان نے کہا کہ وزیر خارجہ خواجہ آصف نے بھارت کے اس اقدام کی سخت الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا ہے’’ بھارت کی لگاتار یہ کوشش ہے کہ کشمیر کی حقیقت پر مبنی جدوجہد کو دبایا جائے اور اسی لئے ایسے غیر انسانی ادامات کو بروئے کار لایا جارہا ہے اتنا ہی نہیں بلکہ ٹارچر،گرفتاریاں اور حراستی ہلاکتیں بھی اسی تسلسل کا حصہ ہے‘‘۔انہوں نے کہا کہ بھارت نے ایک بار پھر 15دسمبر کو اننت ناگ چلو کے موقعہ پر عوامی اجتماع پر قدغن لگا کر کشمیریوں کے بنیادی حقوق کی خلاف ورزی کی ہے۔وزیر خارجہ نے کہا کہ  بھارت کا ایک اور حربہ کشمیری لیڈرشپ کو فرضی کیسوں میں الجھانا ہے،گرفتار کرنا اور انہیں عدالتوں کے ذریعے بلانا ہے۔تازہ مثال گیلانی کو نوٹس بھیجنا ہے جو کہ بھارت کی زور زبردستی کو ظاہر کرتا ہے۔