گیلانی کا خان سوپوری کی علالت پر اظہار تشویش

سرینگر//حریت (گ)چیئرمین سید علی گیلانی نے سینئر آزادی پسند لیڈر غلام محمد خان سوپوری کی دوران حراست علالت پر گہری تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ہمارے کارکن جب جیلوں میں قریب المرگ ہوجاتے ہیں تو اخلاق اور انسانیت سے عاری حکمران انہیں نیم مردہ حالت میں گھروالوں کے سپرد کرتے ہیں تاکہ وہ اُن کے علاج ومعالجہ اور اس انسانیت سوز برتاؤ پر تنقید سے بچ جائیں۔ حریت چیئرمین نے کہا کہ خان سوپوری کو پہلے اپنے گھر سے بے دخل کرکے ذہنی اور جسمانی اذیت میں مبتلا کردیا گیا پھر گرفتار کرکے ریاست سے باہر منتقل کرکے اُن کے گھروالوں کو معاشی اضطراب میں مبتلا کردیا گیا۔ جیل میں کوئی علاج ومعالجہ کی سہولت کے بغیر جب اُن کی صحت تشویشناک حد تک بگڑ گئی تو علاج کے بجائے رہا کرکے گھروالوں کے حوالے کیا گیا۔ انہوں نے حکمرانوں کے اس رویہ کی مذمت کرکے متنبہ کیا کہ اس ساری غیر انسانی کارروائی کے باوجود جدوجہد جاری رہے گی۔