گھنٹہ گھر نے 5سال بعد دوبارہ ٹِک ٹِک کرنا شروع کیا

سرینگر //گھنٹہ گھر لالچوک ایک مرتبہ پھر سے سفید رنگ کی 5فٹ لمبی اور 5فٹ چوڑی گھڑیوں نے ٹک ٹک کرنا شروع کردیا ہے۔ سنیچر کی شام میونسپل حکام نے تاریخی گھنٹہ گھر کے چاروں اطراف Maxima کمپنی کی جانب سے مخصوص طور پر بنائی گئی سفید رنگ کی چار گھڑیوں کو نصب کیا ۔ گھنٹہ گھر کیلئے گھڑیاں وقف کرنے والی ٹائم اینڈ سائونڈ کے مالک آزاد احمد کاکہنا ہے کہ 3لاکھ گھڑیاں تیار کرنے والی کمپنی نے یہ گھڑیاںتیار کی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ گھنٹہ گھر پر نصب گھڑیوںنے 5سال قبل کام کرنا چھوڑ دیا تھا جبکہ پہلے نصب کی گئی گھڑیاں صرف 2فٹ لمبی اور 2فٹ چوڑی تھی مگر Maxima کی طرف سے نصب کی گئی گھڑیاں 5فٹ لمبی اور 5فٹ چوڑی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ گھنٹہ گھر کے چاروںا طراف نصب ہونے والی گھڑیوں کی قیمت 2لاکھ روپے ہے جبکہ گھنٹہ گھر میں نئی گھڑیوں کو نصب کرنے پر ایک لاکھ روپے خرچہ آیا ہے جو ٹائم اینڈ سائونڈ نے برداشت کیا ہے۔ آزاد احمد نے کہا کہ مونسپل کمشنر نے از خود درخواست کی تھی کہ ہم گھنٹہ گھر کیلئے گھڑیاں وقف کریں اور اسی درخواست کو دیکھتے ہوئے ہم نے گھنٹہ گھرکے چاروں اطراف نئی گھڑیاں نصب کرنے کا فیصلہ کیا ۔ انہوں نے کہا کہ سفید رنگ کی ان گھڑیوں کی سوئیاں ہر وقت چکمتی رہیں گی جس سے دور سے وقت کا پتہ چلے گا۔ انہوں نے کہا کہ چاروں گھڑیوں کی دیکھ بھال کیلئے ایک ملازم کو تعینات کیا جائے گا جو ہر ماہ گھڑیوں کی دیکھ ریکھ کرے گا۔ واضح رہے کہ لالچوک کا گھنٹہ گھر 1976-77میں بجاج نامی کمپنی نے جموں و کشمیر پولیس پوسٹ کی جگہ پر تعمیر کروایا تھا اور تب سے گھنٹہ گھر پر بجاج نام کمپنی ہی گھڑیاں نصب کرتی آئی ہے تاہم امسال میونسپل حکام کی ہدایت پر ٹائم اینڈ ساونڈ نامی دکاندار نے گھڑیوں کی معروف کمپنی Maximaکے اشتراک سے گھنٹہ گھر کیلئے مخصوص گھڑیاںتیار کرائی ہیں۔