گول :آدھی برف ہٹی لیکن آدھی وہیں چھوڑ دی گئی | شدید پھسلن کے باعث کسی بھی رابطہ سڑک پر ٹریفک نہ چل سکا

زاہد بشیر
گول//اگر چہ گول کی اکثر سڑکوں پر سے برف ہٹالی گئی تاہم ٹھیک ڈھنگ سے برف نہ ہٹانے اور پھسلن کی وجہ سے کسی بھی سڑک پر گاڑی چل نہیں پائی تا ہم گول رام بن شاہراہ پر بیکن کی جانب سے برف ہٹانے کے ساتھ ہی ٹریفک بحال کر دیا گیا۔ گول سلبلہ روڈ پر کئی گھنٹوں تک ایمبولینس گاڑی پھنسی رہی جس پر لوگوں نے شدید ناراضگی کا اظہار کیا ۔ ناظم دین نامی شہری نے کہا کہ گول سے سلبلہ تک کسی بھی مقام پر پاسنگ زون نہیں بنایا گیا، ہر سو میٹر پر پاسنگ زون ہونا چاہئے اور ایک دو منٹ کا کام ہے لیکن اس کو نہیں بنا رہے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ سڑکوں پر ٹھیک ڈھنگ سے برف نہیں اُٹھائی گئی جس وجہ سے کئی ایسے مقامات ہیں جہاں پر سخت پھسلن ہے اور گاڑیوں کو چلنے میں کافی دشواریوں کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے ۔ زلس کے مقام پر جہاں کافی زیادہ بر ف جمی رہتی ہے اور ہر سال تھوڑی سی بھی برف پڑنے پر یہاں قریباً آدھ کلو میٹر سڑک پر پھسلن کی وجہ سے کافی دشواریاں پیدا ہوتی ہیں ۔یہاں موجود لوگوں نے کہا کہ افسوس کا مقام ہے کہ سڑک کو آمد و رفت کے لئے بحال نہیں کیا گیا اور یہاں لوگوں کو ایک شہری کی نعش ہسپتال تک کاندھوں پر لے جایا گیا کیونکہ پھسلن کی وجہ سے سڑکوں پر ٹھیک طرح سے برف نہ ہٹانے کی وجہ سے گاڑیاں سڑکوں پر نہیں چل پائی ۔لوگوںنے اعلیٰ حکام سے مطالبہ کیا کہ تمام سڑکوں پر جہاں جہاں برف جمنے کا خطرہ رہتا ہے وہاں پر اس کا علاج کیا جائے تا کہ جو پیسہ سرکار سڑکوں پر برف اُٹھانے کے لئے خرچتی ہے اس کا کوئی فائدہ بھی ہو ورنہ یہ تمام فضول خرچی ہے ۔