گنتڑ میں پولنگ سٹیشن کی تبدیلی پر لوگ سیخ پا

منڈی//پارلیمانی انتخاب کے پہلے مرحلے میں جموں پونچھ پارلیمانی حلقہ انتخاب کے دوران تحصیل منڈی کے سرحدی علاقہ گنتڑ میں لوگوں نے انتظامیہ کے تئیں غم و غصے کا اظہار کرتے ہوئے ووٹ ڈالنے سے بائیکاٹ ۔لوگوں نے کہا کہ ان کو اطلاع دئیے بغیر پولنگ اسٹیشن کو مڈل اسکول گنتڑ سے پرائمری اسکول ہل گنتڑ تبدیل کر دیا گیا۔مقامی لوگوں نے کہاکہ اس سلسلہ میں انتظامیہ سے رجوع کیا گیا تھا جبکہ ان کویقین دہانی کروائی گئی تھی کہ پولنگ اسٹیشن کو تبدیل نہیں کیا جائے گا لیکن یقینی دہانی کے باجود بھی ایسا نہیں کیا گیا تاہم لوگوں نے شام 6 بجے تک سابقہ پولنگ سٹیشن پر مشینوں کا انتظار کیا اور نئے پولنگ سٹیشن پر ووٹ ڈالنے سے بائیکاٹ کیا ۔انہوں نے  انتظامیہ کو یہ انتباہ دیا کہ وہ جلد اس پولنگ اسٹیشن کو اپنے سابقہ مقامی پر ہی قائم کیا جائے ۔مقامی لوگوں نے مانگ کرتے ہوئے کہاکہ پولنگ اسٹیشن کی تبدیلی میں ملوث ملازمین کیخلاف کارروائی عمل میں لائی جائے ۔اس سلسلہ میں تحصیلدار منڈی نے کہاکہ پولنگ سٹیشن کو جلدی میں منتقل یا تبدیل نہیں کیا جا سکتا کیوں کہ ایسے عمل کے لئے ایک مکمل طریق کار ہوتا ہے اور آج تک کے پارلیمانی انتخاب کے لئے ایم ایس گنتڑ کے بجائے ہائر سکینڈری اسکول میں ہی پولنگ سٹیشن کا قیام کیا جاتا تھا اور اس بار اس کے لئے پرائمری اسکول گنتڑ کا نئے پولنگ سٹیشن کے طور پر تعین کیا گیا جس سے یہ واضح طور پر عیاں ہوتا ہے کہ پولنگ سٹیشن کو تبدیل نہیں کیا گیا ہے ۔انہوں نے کہاکہ اس سلسلہ میں مقامی لوگوں کو یقین دہانی کروائی گئی تھی کہ وہ اس بار اپنے ووٹ پرائمری اسکول ہل گنتڑ میں ڈالیں اور اس کے بعد قانون کے تحت اور مکمل طریق کار کے ساتھ اس معاملہ کو دیکھ کر بہتر اقدامات اٹھا ئے جائینگے ۔