گرن گائوں میں پانی کی سپلائی کا نظام مفلوج سینکڑوں گھر متاثر ،محکمہ جل شکتی پر لاپرواہی کا الزام

رمیش کیسر
نوشہرہ //نوشہرہ سب ڈویژن کے گرن گائوں میں پینے کے صاف پانی کی سپلائی کا نظام مفلوج ہونے کی وجہ سے سینکڑوں گھرمتاثر ہورہے ہیں لیکن محکمہ جل شکتی کی جانب سے سپلائی نظام کو درست کر کے لوگوں کو پینے کا صاف پانی فراہم کرنے کیلئے کوئی عملی قدم نہیں اٹھایا جارہا ہے ۔مقامی لوگوں نے محکمہ کے اعلیٰ آفیسران کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاکہ سب ڈویژن کے دور افتادہ علاقوں میں پانی کی سپلائی کو بحال رکھنے کی طرف کوئی دھیان ہی نہیں دیاجارہا ہے ۔انہوں نے بتایا کہ محکمہ کے ملازمین ڈیوٹی پر حاضر ہی نہیں ہوتے جبکہ اعلیٰ آفیسران ملازمین کی حاضری کو یقینی بنانے میں سنجیدہ نہیں ہیں جس کی وجہ سے 20دنوں میں ایک مرتبہ پانی کی سپلائی فراہم کی جاتی ہے ۔لوگوں نے بتایا کہ سپلائی کو بحال رکھنے اور ملازمین کی حاضری کو یقینی بنانے کیلئے کئی مرتبہ متعلقہ حکام سے بھی رابطہ کیاگیا لیکن نہ ہی مقامی انتظامیہ اور نہ ہی محکمہ کے اعلیٰ آفیسر لوگوں کو سہولیت فراہم کرنے کیلئے سنجیدہ ہیں ۔غور طلب ہے کہ جل جیون مشن کی عمل آوری کے سلسلہ میں مسلسل بنیادوں پر ضلع انتظامیہ راجوری کی جانب سے جائزہ اجلاس منعقد کئے جاتے ہیں لیکن کاغذوں میں فراہم کی جارہی سہولیات اور دعوئوں کا مبینہ طورپر زمینی صورتحال سے کوئی تعلق دکھائی نہیں دیتا ۔مقامی لوگوں نے مانگ کرتے ہوئے کہاکہ ملازمین کی حاضری کو یقینی بناکر لوگوں کو پانی کی سپلائی فراہم کی جائے ۔