گجرات کے دولیڈروں کو ملک کے آئین وقانون کااحترام نہیں:سوز

سرینگر//پردیش کانگریس کے سابق صدر سیف الدین سوز نے کہا ہے کہ گجرات کے دو لیڈروں کوملک کے قانون اور آئین کا کوئی احترام نہیں ہے۔ایک بیان میں سوز نے کہاکہ ایڈوکیٹ تحسین پونا والا اور فلم ادکارہ سوارا بھاسکر نے بجاطور پر عدلیہ سے کہا ہے کہ وہ پریگیا ٹھاکر کو واپس جیل بھیج دے کیونکہ اُس نے بیماری کا بہانہ بناکر ضمانت پر کچھ دیر کیلئے رہائی پائی ہے ۔وزیر اعظم مودی اور امیت شاہ نے پریگیا ٹھاکر جیسی دہشت گرد کو بھوپال سے لوک سبھا کا الیکشن لڑنے کیلئے چن لیا ہے اور اس طرح ثابت کیا ہے کہ گجرات کے ان دونوں لیڈروں کو ملک کے قانون اور آئین کا کوئی احترام نہیں ہے۔ہندوستان کے جانکار سیاسی تجزیہ نگاروں نے اس بات پر افسوس کا اظہار کیا ہے کہ گجرات کے ان لیڈروں نے ہندوستان کی سماجی ، سیاسی اور ثقافتی فضاء کو کافی نقصان پہنچایا ہے۔  سوز نے مزیدکہا کہ تعجب کی بات ہے کہ ان دونوں لیڈروں کو اس بات کا ذرا سا بھی احساس نہیں ہے کہ اُن ہی کی بنائی ہوئی تحقیقاتی ایجنسی این آئی اے (NIA) نے پریگیا ٹھاکر کو 2006 میں مالے گائوں میں ہوئے بم دھماکوں کیلئے براہ راست ذمہ دار ٹھہرایا تھا جہاں سات معصوم لوگ مر گئے تھے اور بہت سارے لوگ زخمی ہو گئے تھے۔ اُسی حادثے کیلئے ذمہ دار ٹھہراتے ہوئے این آئی اے نے پریگیا ٹھاکر کو جیل پہنچایا تھا جہاں سے وہ اب سات برس کے بعد ضمانت پر رہا ہوئی ہے ۔