گاندربل کے بیشتر علاقوں میں غیر اعلانیہ کٹوتی شروع | صارفین میںمحکمہ بجلی کے خلاف برہمی کا اظہار

گاندربل//سردیوں کے ایام شروع ہونے کے ساتھ ہی گاندربل کے بیشتر علاقوں میں بجلی کی آنکھ مچولی کی شروعات ہو گئی ہے جس کے نتیجے میں صارفین میں ناراضگی پائی جارہی ہے۔صارفین نے بتایا کہ سردیوں کے ایام شروع ہونے کے ساتھ ہی محکمہ بجلی نے کٹوتی شروع کردی ہے جس کی وجہ سے مقامی آبادی کو گھنٹوں گھپ اندھیرے میں رہنے پر مجبور کردیا گیا ہے۔گاندربل کے بیشتر علاقوں جن میں شالہ بگ، ژھندنہ ،واکورہ ،بٹہ وینہ ،تولہ مولہ ،سہ پورہ، صفاپورہ، لار،چونٹھ ولی وار ،بنہ ہامہ ،منیگام ،وسن اور کنگن کے علاقوں میں گھنٹوں بجلی جاتی ہے جس کی وجہ سے صارفین میں محکمہ بجلی کے خلاف ناراضگی پائی جارہی ہے۔کئی صارفین نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ محکمہ بجلی نے گزشتہ ایک ہفتے سے غیر اعلانیہ بجلی کی کٹوتی شروع کردی ہے۔لار قصبہ کے مشتاق احمد شیخ نامی ایک شہری نے بتایا کہ روزانہ گھنٹوں بجلی چلی جاتی ہے جس کی وجہ سے کافی مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے کیونکہ ان دنوں شادی بیاہ اور بچوں کے امتحانات کی تیاریاں عروج پر ہیں ایسے میں گھنٹوں بجلی کی عدم دستیابی سے مشکلات کا سامنا کرنا پرتا ہے۔انہوں نے کہا کہ اگر یہ سلسلہ جاری رہا تو لوگ احتجاج کرنے پر مجبور ہیں۔محکمہ بجلی کے اعلیٰ حکام نے اس ضمن میں کہا کہ روزانہ دو گھنٹے کی کٹوتی شروع کردی گئی ہے ۔