کھڑی بانہال میں سڑک حادثہ

بانہال // بانہال کے کھڑی علاقے میں ایک ٹاٹا سومو گاڑی کو پیش آئے حادثے میں آٹھویں جماعت کا ایک طالب علم لقمہ اجل بن گیا جبکہ اس حادثے میں ڈرائیور سمیت دو مسافر زخمی ہوئے ہیں۔ یہ گاڑی منڈکباس سے کھڑی کی طرف آنے کے دوران منڈکباس کے قریب سڑک سے لڑھک کر مہو نالہ میں گر گئی ہے۔ اس واقع کی اطلاع ملتے ہی مقامی لوگ بچاؤ کاروائیوں میں جٹ گئے اور فوری طور پر تینوں کو شدید زخمی حالت میں پرائمری ہیلتھ سینٹر کھڑی منتقل کیا جہاں ایک زخمی کو مردہ قرار دیا گیا بعد میں بانہال والنٹیرس اور پولیس بھی بچاؤ کاروائیوں میں شامل ہوئے ۔ پولیس زرائع نے مرنے والے لڑکے کی شناخت پندرہ سالہ نوجوان شاہد امین ولد محمد امین نائیک ساکنہ آڑپنچلہ ، کھڑی کے طور کی ہے۔ بتایا جاتا ہے شاہد امین آٹھویں جماعت کا طالب علم تھا ۔ اس حادثے میں دو زخمیوں کو کھڑی کے ہسپتال سے سب ضلع ہسپتال بانہال منتقل کیا گیا جہاں سے بعد میں انہیں ڈاکٹروں نے مزید علاج و معالجہ کیلئے سرینگر کے ہسپتال منتقل کیا ۔ زخمیوں کی شناخت ظفر عباس ولد غلام محمد ساکنہ کھڑی اور طالب سلیم ولد محمد سلیم ساکنہ کھڑی تحصیل کھڑی ضلع رام بن کے طور کی گئی ہے – پولیس نے اس سلسلے میں ایک کیس درج کرکے معاملے کی مزید تحقیقات شروع کردی ہے – شاہد امین کی ہلاکت کی خبر کے بعد پورے کھڑی علاقے میں صف ماتم بچھ گئی