کچھ نیا نہ انقلابی ، صرف ہوس ِ اقتدار | انتخابات نے ’گپکار الائنس‘کے ایجنڈے کو بے نقاب کر دیا:الطاف بخاری

سرینگر//اپنی پارٹی صدر سید محمد الطاف بخاری نے کہا ہے کہ جموں وکشمیر میں ضلع ترقیاتی کونسل انتخابات نے ہوس ِ اقتدار کی خاطر ’گپکار الائنس‘کے مصنوعی سیاسی ایجنڈے کو بے نقاب کر دیا ہے۔ ضلع بارہمولہ کے حلقہ پٹن کے نہال پورہ میں منعقدہ انتخابی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے بخاری نے کہاکہ نام نہاد ’عوامی اتحاد ‘کے دستخط کنندگان نے عوامی حلقوں میں اپنی اہمیت کو یقینی بنانے کے لئے ایکبار پھر جذباتی استحصالی اور گمراہ کن مہم چلائی۔ انہوں نے مزید کہا’’اِنہیں صرف الیکشن کے وقت لوگ یاد آتے ہیں، گذشتہ برس اِس کو گپکار الائنس کا نام دیا اور بعد میں دستخط کنندگان نے اِس میں ’عوام‘لفظ بھی لگادیا، یہاں تک کہ گپکار الائنس کا یہ نام ایک غلط نام ہے اور لوگوں کے دیرینہ مسائل سے اِ ن کا دور دور تک واسطہ نہیں۔اِس الائنس میں کچھ نیا اور انقلابی نہیں ، یہ صرف اپنے سیاسی تحفظ اور ہوس ِ اقتدار کی خاطر گٹھ جوڑ ہے ۔ گپکار دستخط کنندگان کی طرف سے ڈی ڈی سی الیکشن کے دوران جذباتی سیاستی نعرے دیئے جانے پر افسوس ظاہر کرتے ہوئے بخاری نے کہا’’جموں وکشمیر کے لوگ بہترجج ہیں، وہ دہائیوں سے ایسے سیاسی نعرؤں کو دیکھ رہے ہیں اور اِن کا تجزیہ کر رہے ہیں، آپ لگاتار اِس طرح جذباتی استحصال کا شکار نہیں ہوسکتے، وہ بھی ایسے انتخابات کے لئے جوصرف تعمیر وترقی کے لئے ہیں، اِن کا سیاست سے کچھ لینا دینا نہیں۔ انہوں نے کہاکہ الائنس کے اندر اقتدار کے لئے پھوٹ سے ہر کوئی واقف ہے ،میں اُنہیںیا د دلادوں ، لوگ خاموش تماشائی نہیں، وہ آپ کے بلند وبانگ سیاسی دعوؤں اور مشترکہ اُمیدواروں کو اُتارنے، پارٹی کے مخالفین اور آزاد اُمیداروں کو سپانسر کرنے کے شاہد ہیں، جنہیں آپ ایکدوسرے نے میدان میں اُتارا ہے‘‘۔ انہوں نے کہاکہ جموں وکشمیر کے لوگ گپکار الائنس کے اتحادیوں اور حکمراں سیاسی جماعت جس کو اب وہ مخالف کہہ رہے ہیں، کے ساتھ اتحاد کو نہیں بھولے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ سرینگر میں سیاسی مقصد کے لئے گپکار الائنس بناکر وہ آپس میں ایکدوسرے کے خلاف کھڑے ہیں اور اس طرح سے ضلع ترقیاتی کونسلوں میں بہتر نمائندگی کے لئے لوگوں کو بہتر شخص چننے کے حق سے محروم کر رہے ہیں۔ریلی سے خطاب کرتے ہوئے اپنی پارٹی سنیئر نائب صدر غلام حسن میر نے کہاکہ لوگوں کو احساس ہوگیا کہ ہے کہ یہ اتحاد سنجیدہ نہیں جیسا کہ دکھایاجارہاہے۔ انہوں نے کہا’’ انتہائی بدقسمتی کا مقام ہے کہ ضلع ترقیاتی کونسل انتخابات کو چند گمراہ کن سیاسی معاملات کے ساتھ جوڑ کر کے اِن جماعتوں نے انتخابی عمل کا مذاق اُڑایا ہے۔ لوگوں کو کھوکھلے نعرؤں سے بیوقوف بنانے کی کوشش کے بعد یہ نام نہاد الائنس زمین پر نہیں دکھائی نہیں دیا جس سے یہ ایکسپوز ہوگئے ہیں۔میر نے کہاکہ لیڈرشپ سطح پر یہ اتحاد اسمبلی انتخابات کے اعلان تک ہی رہے گا۔ لوگ ایک مناسب وقت پر دیکھیں گے کہ کیسے ایس الائنس کی ہوا نکلتی ہے اور وہ کس طرح اقتدار کی کُرسی پر براجمان ہونے کے لئے ایکدوسرے کیخلاف ہوں گے۔