کپوارہ ہسپتال میںطبی عملہ کی عدم موجودگی

 کپوارہ//سب ضلع اسپتال کپوارہ میں طبی عملی کی عدم موجودگی کی وجہ سے منگل کوایک حادثے میں زخمی ہوئے افراد کو علاج و معالجہ کرنے کے لئے سب ضلع اسپتال سوگام جانا پڑا۔زخمیو ں نے الزام لگایا کہ جو ں ہی وہ سب ضلع اسپتال کپوارہ میں علاج و معالجہ کرنے کی غرض سے پہنچ گئے تو وہا ں ایمر جنسی میں کوئی بھی ڈاکٹر موجود نہیں تھا جس کے نتیجے میں ان کا علاج و معالجہ وہا ں پر نہ ہوسکا اور انہیں 25کلو میٹر دور سب ضلع اسپتال سوگام علاج و معالجہ کے لئے جانا پڑا ۔مذکورہ زخمیو ں نے سخت ناراضگی کا اظہار کرتے ہوئے بتا یا کہ کپوارہ اسپتال میں مریضوں کا کوئی پرسان حال نہیں ہے ۔اس حوالے سے جب بلاک میڈیکل آ فیسر کپوارہ ڈاکٹر فرید احمد شاہین سے رابطہ کیا گیا تو انہو ں نے بتا یا کہ ایمر جنسی میں 24گھنٹہ ڈاکٹر موجود رہتے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ جب یہ زخمی ایمر جنسی میں پہنچ گئے تو وہا ں پر مریضو ں کی بھیڑ تھی اور ڈاکٹروں نے ان زخمیو ں کی مرہم پٹی کے بعد انہیں آ پریشن تھیٹر روانہ کیا لیکن وہا ں اہم سرجری ہورہی تھی جس کے نتیجے میں انہیں کچھ دیر انتظار کرنے کے لئے کہا گیا لیکن انہو ں نے زبردست غصہ کیا اور وہا ں سے خود بھاگ گئے ۔