کپوارہ میں غذائی اجناس کی قیمتو ں میں ہوش ربااضافہ

کپوارہ// سرینگر جموںشاہراہ مسلسل بند رہنے کی وجہ سے ضلع کپوارہ میں غذائی اجناس کی قیمتو ں میں ہوش ربا اضافہ ہو گیا ہے ۔لوگو ں کا کہنا ہے کہ انتظامیہ خواب خرگوش میں مست ہے اور مہنگائی پر قابو پانے کیلئے فوری طور چیکنگ سکارڈ تشکیل دئے جائیں ۔کپوارہ ضلع کے دیگر علاقوں ہندوارہ،کرالہ گنڈ ،لنگیٹ ،ترہگا م ،کرالہ پورہ ،ویلگام ،سوگام ،لالپورہ ،کولنگام اور چوگل میں جمو ں سرینگر شاہراہ مسلسل بند رہنے کی وجہ سے اشیائے ضروریہ کی قیمتو ں میں اس قدر اضافہ کیا گیا ہے کہ لوگو ں حیران ہو کر رہ جاتے ہیں ۔لوگو ں کا کہنا ہے کہ کمر تو ڑ مہنگائی نے لوگوں با لخصوص غریبوں کو بے حال کر کے رکھ دیا ہے ۔ضلع کے لوگو ں نے بتا یا کہ موسم سرما اور بھاری برفباری کے دوران اگرچہ سبزیو ں کی قیمتو ں میں کوئی اضافہ نہیں ہوا تھا لیکن سرینگر جموںشاہراہ آئے رو ز بند ہونے کے نتیجے میں سبزیو ں ،پھلو ں اور دیگر ضروریات زندگی کے چیزوں میں ہو ش ربا اضافہ کیا گیا ہے اور جس روز شاہراہ بند رہتی ہے تو ذخیرہ اندوز لوگو ں کی کھال اتار نے میں کوئی کسر باقی نہیں رکھتے ہیں ۔لوگو ں کا کہنا ہے کہ اشیائے ضروریہ کی قیمتو ں میں اضافہ کے ساتھ غریب طبقہ اس کا زیادہ تر شکار ہوتا ہے اور انہیں ان چیزوں کی قوت خرید باقی نہیں رہی ہے اور ایسے کنبے اپنی ضروریات کو پورا کرنے میں مشکلات کا سامنا کرتے ہیں ۔اس حوالے سے اسسٹنٹ کمشنر رینو کپوارہ بشیر احمد بٹ نے کشمیر عظمیٰ کو بتا یا کہ ضلع انتظامیہ کو اس قسم کی شکایت ضلع کے اکثر علاقوں سے مو صول ہورہی ہیں تاہم انتظامیہ نے متعلقہ تحصیل انتظامیہ کو ہدایت دی ہے کہ ناجائز منافع خورو ں کے خلاف سخت کاروائی کی جائے اور فوری طور مقامی سطح پر چکینگ سکارڈ تشکیل دیں تاکہ کمر تو ڑ مہنگائی پر قابو پایا جائے ۔