کپوارہ میں برفانی تودے گرآنے کی وارننگ لداخ ، مغل روڑ، سنتھن ٹاپ اور گریز شاہراہیں بدستور بند

 عظمیٰ نیوز سروس+عاصف بٹ

سرینگر +کشتواڑ//جموں و کشمیر ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی (جے کے ڈی ایم اے)نے جمعہ کو ضلع کپواڑہ میں اگلے 24 گھنٹوں میں برفانی تودے گرنے کی وارننگ جاری کی ہے۔حکام کے مطابق اگلے 24 گھنٹوں میں کپواڑہ ضلع میں سطح سمندر سے 2800 میٹر کی بلندی پر کم خطرے کی سطح کے ساتھ برفانی تودہ گرنے کا امکان ہے۔حکام نے ان علاقوں میں رہنے والے لوگوں کو بھی مشورہ دیا کہ وہ احتیاطی تدابیر اختیار کریں اور اگلے احکامات تک برفانی تودے کے شکار علاقوں میں جانے سے گریز کریں۔

 

ادھرجموں و کشمیر کے سونمرگ سیاحتی مقام پر جمعہ کو دوسرے دن ہلکی برفباری ریکارڈ کی گئی جبکہ محکمہ موسمیات نے مرکز کے زیر انتظام علاقوں میں موسم میں نمایاں بہتری کی پیش گوئی کی ہے۔کشمیر میں تین ہفتوں سے جاری خشک موسم جمعرات کو وادی کے بالائی علاقوں میں برف باری اور میدانی علاقوں میں بارش کے ساتھ ختم ہوا۔حکام نے بتایا کہ جمعرات کو گلمرگ، وسطی کشمیر میں سونمرگ اور درمیانی اور اونچے علاقوں کے دیگر علاقوں میں برفباری ریکارڈ کی گئی، جبکہ گاندربل ضلع کے سونمرگ میں جمعہ کی صبح بھی ہلکی برفباری جاری رہی۔حکام نے بتایا کہ 2 سے 10 دسمبر تک موسم جزوی طور پر ابر آلود رہے گا۔دریں اثناء جمعرات کی صبح اچھی خاصی برفباری کے پیش نظر مغل روڑ، سنتھن ٹاپ کشتواڑ روڑ، لداخ شاہراہ، بانڈی پورہ گریز روڑ اور کرنا ہ روڑ دوسرے روز بھی بند رہے۔ادھر کشتواڑضلع کے بالائی علاقوںمیں دوسرے روز بھی ہلکی برفباری ہوئی۔سنتھن اور مرگن ٹاپ پر دوسرے روز بھی برفباری ہوئی شاہراہ آمدرفت کیلے بند رہی۔سب ڈویژن مڑواہ کے واڑون میں کئی انچ تازہ برفباری ہوئی۔ سکھنائی بسمینہ و دیگر علاقوں کے علاوہ پاڈر کے مچیل میں بھی تازہ برفباری ہوئی۔ سنتھن و مرگن ٹاپ پر دوسرے روز بھی برفباری ہوتی رہی۔