کوٹرنکہ کی کنتھول اور مڑہوتہ پنچایتیں بنیادی سہولیات سے محروم

کوٹرنکہ //سب ڈویژن کوٹرنکہ کی کنتھول اور مڑہوتہ پنچایتوں میں بنیادی سہولیات کت فقدان کی وجہ سے مقامی لوگ پسماند ہ طرز کی زندگی بسر کرنے پر مجبور ہو گئے ہیں ۔ان دونوں پنچایتوں کے کوٹ گلی ،شیھو گاہی ودیگر وارڈوں میں پینے کے صاف پانی کے ساتھ ساتھ بجلی کی عدم دستیابی اور سڑک رابطوں کے فقدان کیساتھ ساتھ طبی سہولیات بھی میسرنہیں ہیں ۔مقامی لوگوں نے ضلع انتظامیہ کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاکہ آزادی سے لے کر آج تک مذکورہ دیہی و پسماندہ علا قوں کی تعمیرو ترقی کی جانب کوئی توجہ نہیں دی گئی ۔انہوں نے کہاکہ ان علا قوں میں صرف انتخابات کے دنوں میں ہی سیاسی ہلچل ہو تی ہے جس کے دوران غریب لوگوں کیساتھ تعمیر و ترقی کے نام پر وعدے کئے جاتے ہیں لیکن اس کے بعد مذکورہ علا قوں کی جانب کوئی توجہ نہیں دی جاتی ۔ظفر نامی ایک شخص نے سیاسی پارٹیوں کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاکہ مفاد پرست سیاستدان اپنی سیاسی و ذاتی مفاد کیلئے غریب لوگوں کو استعمال کر تے ہیں ۔انہوں نے کہاکہ کنتھول اور مڑہوتہ پنچایتوں میں رہائش پذ یر لوگ اس وقت پسماندگی کی زندگی بسر کرنے پر مجبور ہو چکے ہیں ۔مقامی لوگوں نے پی ڈی پی اور بھاجپا کی سابقہ ریاستی مخلوط حکومت کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاکہ گزشتہ انتخابات میں پی ڈی پی کے وعدوں پر انہوں نے ووٹ دئیے تھے لیکن اقتدار میں آنے کے بعد پارٹی کے منتخب نمائندوں نے عوام کو یکسر نظر انداز کیا ۔مقامی لوگوں نے انتظامیہ سے اپیل کرتے ہوئے کہاکہ کنتھول اور مڑہوتہ پنچایتوں میں سڑک ،پانی بجلی اور طبی سہولیات فراہم کی جائے تاکہ مقامی لوگوں کو سہولیات میسر ہو سکیں۔